تاجروں کا 28 اور 29 اکتوبر کو ملک بھر میں شٹر ڈاؤن ہڑتال کا اعلان

54

اسلام آباد: انجمن تاجران نے ایف بی آر کے ساتھ مذاکرات ناکام ہونے پر 28 اور 29 اکتوبر کو ملک بھر میں شٹر ڈاؤن ہڑتال کا اعلان کردیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق تاجروں نے حکومت کی معاشی پالیسیوں کیخلاف وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں احتجاج کیا۔ ملک بھر سے آئے ہوئے تاجر ہاکی گراؤنڈ میں جمع ہوئے جہاں سے شرکاء نے ایف بی آر کے دفتر کے باہر احتجاجی مظاہرے کیلئے مارچ شروع کیا تو انہیں سرینا چوک پر روک دیا گیا۔

مظاہرین نے رکاوٹوں کو عبور کرنے کی کوشش کی تو پولیس نے لاٹھی چارج کیا، جس کے جواب میں مظاہرین نے بھی پولیس پر  پتھراؤ کیا۔

بعد ازاں تاجروں نے سرینا چوک پر ہی دھرنا دے دیا، جس کے بعد ایف بی آر کی ٹیم اور تاجر عہدیداروں کے درمیان مذاکرات ہوئے جو بے نتیجہ ثابت ہوئے۔

تاجر نمائندہ وفدنے آئندہ کےلائحہ عمل کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ قیادت نے فیصلہ کر لیا ہے کہ 28 اور 29 اکتوبر کو پورے ملک میں شٹرڈاوٴن کیا جائے گا جب کہ 15 اکتوبر سے روزانہ ایک گھنٹے کی ہڑتال کی جائے گی۔

تاجروں کا مطالبہ ہے کہ حکومت کاروباری طبقے کو سہولتیں دے ناکہ غیر ضروری دستاویزات کی فراہمی کا مطالبہ کرے۔

تاجر رہنماؤں نے کہا کہ حکومت کی شناختی کارڈ کی شرط تسلیم نہیں، شناختی کارڈ کی شرط کو نہیں مانتے اور حکومت جو مرضی کر لے ہم شناختی کارڈ نہیں دیں گے،