مولانا فضل الرحمن دھرنے کیلیے آئیں تو سہی پھردیکھیں گے،عثمان بزدار

237

لاہور(نمائندہ جسارت)وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدارنے سرکٹ ہاؤس ملتان میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہاہے کہ میںہر ضلع اورڈویژن کا دورہ کررہا ہوں۔ملتان میں اربوں روپے کے ترقیاتی منصوبوں پر کام جاری ہے ، نشترٹواسپتال کا کام شروع ہورہا ہے ۔انہوںنے کہاکہ صحافیوں کے مسائل کے حل کے لیے جرنلسٹ ہاؤسنگ فاؤنڈیشن کاسب آفس ملتان میں کھولا جائے گا۔وزیراعلیٰ نے صحافیوں کو بھی صحت انصاف کارڈ کے اجراء کا اعلان کرتے ہوئے کہاکہ ہاؤسنگ کالونی فیز ٹو کے لیے کمشنرکو ہدایات جاری کردی گئی ہیں اورصحافیوں کا یہ مسئلہ بھی حل کریںگے۔ انہوںنے کہاکہ ملتان پریس کلب کی گرانٹ کے ایشو کو بھی حل کیا جائے گا۔جنوبی پنجاب کی ترقی و خوشحالی کے لیے 35فیصد فنڈز رکھے گئے ہیں اور یہ فنڈز صرف جنوبی پنجاب پر ہی خرچ ہوںگے۔انہوںنے کہاکہ پنجاب کابینہ نے جنوبی پنجاب کیلئے مختص فنڈز کسی اور مقصد کے لیے استعمال کرنے پر پابندی عاید کردی ہے ۔وزیراعلیٰ نے کہاکہ جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کے لیے 3ارب روپے رکھے گئے ہیں اورجنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کے قیام کے لیے انتظامی لحاظ سے تیاریاں مکمل ہیں،سیاسی اتفاق رائے کے ذریعے سیکرٹریٹ کے مقام کا اعلان کیا جائے گا۔وزیراعلیٰ نے کہاکہ ڈیرہ غازی خان میں انسٹی ٹیوٹ آف کارڈیالوجی کا اسی ماہ سنگ بنیاد رکھا جائے گا ، پنجاب کے پسماندہ علاقوں میں 5مدر اینڈ چائلڈ اسپتال بنائے جارہے ہیں ،نشتر اسپتال میں 30ڈائیلسز کی نئی مشینوںکا اضافہ کیا جارہا ہے،شعبہ صحت کو بہتر بنانے کے لیے ہر ضروری اقدام اٹھائیںگے۔انہوںنے کہاکہ والڈ سٹی آف لاہور اتھارٹی کا دائرہ کار پنجاب بھر میں پھیلا دیاگیاہے ،ملتان کی تاریخی عمارتوں کی اصل حالت میں بحالی کا کام جلد شروع ہوگا،جنوبی پنجاب کا صوبہ بنانے کے لیے2 تہائی اکثریت چاہیے۔وزیراعلیٰ نے کہاکہ وزراء کی کارکردگی کا جائزہ لے رہا ہوں ، وزراء کے محکموں میں ردوبدل وزیراعلیٰ کا اختیار ہے ۔ انہوں نے کہاکہ مولانا فضل الرحمن دھرنے کے لیے آئیں تو سہی پھردیکھیں گے۔