کندھ کوٹ، 70 سے زائد فراریوں نے ہتھیار ڈال دیے

66

کندھکوٹ(نمائندہ جسارت)کندھکوٹ میں 70 سے زائد فراریوں نے رینجرز پولیس اور سول حکام کی موجودگی میں ہتھیار ڈال دیے۔کندھکوٹ کے 82 ونگ شہباز رینجرز کے ہیڈ کوارٹر
میں منعقدہ تقریب کے دوران علاقے کے تیغانی، جاگیرانی، چولیانی، میرانی، سبزوئی، جتوئی، سرکی، اور نند وانی ودیگر قبائل سے تعلق رکھنے والے 70 سے زائد فراریوں نے غیرقانونی اور مجرمانہ فعل ترک کرتے ہوئے قومی دھارے میں شامل ہونے کا اعلان کیا۔تقریب میں فراریوں نے اپنا اسلحہ و گولیاں سیکٹر کمانڈر شہباز رینجرز کرنل محمد ساجد کے حوالے کیا۔اس موقع پر ڈی آئی جی لاڑکانہ عرفان بلوچ، ڈپٹی کمشنر کشمور منور علی مٹھیانی، اور ایس ایس پی کشمور اسد رضا شاہ بھی موجود تھے۔قومی دھارے میں شامل ہونے والوں نے آئندہ کسی بھی غیرقانونی سرگرمیوں اور مجرمانہ کارروائیوں میں ملوث نہ ہونے کے عزم کا اظہار کیا اور انہیں قومی دھارے میں لانے کے لیے سندھ رینجرز کی کاوشوں کو بھی سراہا۔انہوں نے کہا کہ وہ اب اس پاک سرزمین کی سلامتی اور تحفظ کے لیے کسی قربانی سے دریغ نہیں کریں گے اور ہمیشہ ملک وقوم کے وفادار رہیں گے۔سیکٹر کمانڈر شہباز رینجرز کرنل محمد ساجد، ڈی آئی جی لاڑکانہ عرفان بلوچ، ڈپٹی کمشنر کشمور منورعلی مٹھیانی اور ایس ایس پی اسد رضا شاہ نے قومی دھارے میں شامل ہونے والوں کو قومی پرچم اور دیگر تحائف پیش کیے اور ان کے قومی دھارے میں شامل ہونے کے جذبے کو بھی سراہا۔
کندھکوٹ فراری