فضل الرحمان سے ڈیل نہیں ہوگی، وہ خود ڈھیل ہوجائیں گے، سید اعجازشاہ

52

اسلام آباد (خبر ایجنسیاں) وفاقی وزیرداخلہ بریگیڈیئر(ر) اعجاز شاہ نے کہا ہے کہ مولانا فضل الرحمان سے ڈیل نہیں ہوگی ، وہ خود ڈھیل ہوجائیں گے۔ مولانا فضل الرحمان کے
پیچھے لوگ نہیں نکلیں گے۔ مودی نے ہماری شہ رگ کو پکڑا ہواہے اور مولانا فضل الرحمان دھرنا کررہے ہیں۔ اگلی بار پھر تحریک انصاف کی حکومت آئے گی، کوئی پارٹی تحریک انصاف کے لیے چیلنج نہیں ہے۔انہوں نے نجی ٹی وی کے پروگرام میں خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ جب نائن الیون ہوا تو میں ہوم سیکرٹری پنجاب تھا، ہمیں پتا چلا کہ ایک جہاز نے اس طرح بلڈنگ کو ہٹ کیا۔ انہوں نے کہا کہ حکومت نے تمام جہادی تنظیموں کو کنٹرول کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ پاکستان میں کسی جنگی سردار یا دہشتگرد کی جگہ نہیں ہے۔انہوں نے کہا کہ ایف اے ٹی ایف کے تحت حکومت منی لانڈرنگ کرنے والوں کیخلاف بڑا کام کیا۔عمران خان نے تنقید کے باوجود منی لانڈرنگ کیخلاف کریک ڈاؤن کیا۔ وائٹ کالر کرائم ثابت کرنا مشکل ہوتا ہے۔ اعجاز شاہ نے کہا کہ اس ملک کے حکمران طبقے نے ملک کو تباہ کردیا ہے، حکومت ستر سالوں کا کوڑا صاف کررہی ہے۔کراچی ہم سے صاف نہیں ہورہا ہے۔اگر کوئی حکومتی بندہ کام ٹھیک نہیں کررہا توتنقید کریں لیکن اگر وہ ٹھیک جا رہے ہیں توان کو وقت دینا چاہیے۔ملک کی خستہ حالی کا ذمہ دار ایک فرد کو نہیں ٹھہرایا جاسکتا۔ انہوں نے کہا کہ آصف زرداری کیخلاف کیس تگڑا ہے، کیس جاندار نہ ہوتا تو وہ جیل میں نہ ہوتے۔ انہوں نے کہا کہ پی ٹی آئی کو خطرہ صرف پی ٹی آئی سے ہے، اگر ہم ڈلیور کریں گے تو لوگ ہم پراعتماد کریں گے، اگلے چار سال میں حالات ٹھیک ہوجائیں گے۔ وزیراعظم کی نیت اور سمت دیکھی جائے کہ کس طرف جا رہے ہیں۔ بلاوجہ تنقید نہیں کی جانی چاہیے۔
وزیر داخلہ