نیب اہلکا رفریال تالپورکو جیل واپس لے جانا بھول گئے

41

راولپنڈی (آن لائن) نیب اہلکار پارک لین اور ٹھٹھہ واٹر سپلائی ریفرنس میںنامزدگی کے باعث راولپنڈی سینٹرل جیل اڈیالہ میں پابند سلاسل سابق صدر آصف زرداری کی ہمشیرہ فریال تالپورکو سندھ اسمبلی کے اجلاس میں شرکت سے واپسی پر جیل لے جانا بھول گئے ۔ذرائع کے مطابق سندھ اسمبلی کے اجلاس میں شرکت کے بعد کراچی سے اسلام آباد آنے پر فریال تالپور کو کوئی اہلکار ائر پورٹ لینے نہ آیاجس پر فریال تالپور ذاتی گاڑی میں خود ائر پورٹ سے اڈیالہ جیل روانہ ہوئیں۔ذرائع کے مطابق عدالتی احکامات کے تحت فریال تالپور سندھ اسمبلی کے اجلاس میں شرکت کے لیے کراچی گئیں تھیں جبکہ پروڈکشن آرڈر پر جانے والے ملزم کو واپس جیل لانا پولیس کی ذمے داری ہے ۔جیل ذرائع کا کہنا ہے کہ جیل انتظامیہ سے ملزم وصول کرنے والا متعلقہ ادارہ ہی واپس ملزم جیل انتظامیہ کے حوالے کرتا ہے کیونکہ ہمارے پاس ملزم کے سفر کے لیے گاڑی ہی نہیں تاہم جیل سپرنٹنڈنٹ ثاقب نذیرنے جمعرات کی شام فریال تالپورکے جیل پہنچنے کی تصدیق کر دی ،جیل سپرنٹنڈنٹ کے مطابق انہیں راولپنڈی پولیس جیل لے کر آئی۔ یا درہے کہ اسپیکر سندھ اسمبلی نے فریال تالپور کے اجلاس میں شرکت کے لیے پروڈکشن آرڈر جاری کیے تھے جس پر عدالت نے فریال تالپور کو اجلاس میں شرکت کی اجازت دی تھی ۔