دہلی سرکار کشمیر سے متعلق اپنی عدالت کے حکم سے انکار کررہی ہے، لیاقت بلوچ

60

لاہور(نمائندہ جسارت) نائب امیر جماعت اسلامی پاکستان اور سابق پارلیمانی لیڈر لیاقت بلوچ نے کہا ہے کہ بھارت کے وزیراعظم نریندر مودی عملاً جمہوری آمراور فاشسٹ بنے ہوئے ہیں ، جمہوریت کے ماتھے پر مکروہ داغ ہے ۔ مقبوضہ کشمیر میں 45 دن سے بدترین کرفیو اوربھارتی عدالت عظمیٰ کی ڈائریکشن سے دہلی سرکار انکار کر رہی ہے ۔ جمہوریت کی تمام قدروں کو پامال کر دیا گیاہے ۔بھارت کی سب سے بڑی جمہوریت اوربھارت کے انسان دشمن و نفسیاتی مریض نریندر مودی کے اقدامات پر عالمی برادری اپنا کردار ادا کرے ۔ کرفیوختم کر دیا جائے ۔ کشمیریوں کو انسانی حقوق دیے جائیں اور خطے میں پائیدار امن کے لیے کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جائے ۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے منصورہ میں مشاورتی اجلاس اورپریس کلب میں خلیج کی صورتحال پر سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ لیاقت بلوچ نے کہاکہ سعودی تیل تنصیبات پر حملہ سعودی سلامتی اور دنیا بھر کی معیشت پر حملہ ہے ۔ حرمین شریفین کی حفاظت تمام اہل ایمان کی دینی ذمے داری ہے ۔ سعودی عرب میں اقتدار تیسری نسل کی جانب منتقل ہورہاہے ۔ مسلمان دشمن عالمی قوتیں محمد بن سلمان کے خلاف مسلسل سازشیں کر رہی ہیں ۔ انہوںنے کہاکہ عالم اسلام کے اتحاد کے لیے مکہ مکرمہ میں او آئی سی کی سربراہ کانفرنس بلائی جائے تاکہ عالم اسلام کے اتحاد ، سعودی عرب کے خلاف سازشوں ، کشمیر ، فلسطین اور افغانستان کے سلگتے اور اہم ترین ایشوز کا عالم اسلام کی قیادت حل تلاش کرسکے ۔ امریکا اور مغرب جلتی پر تیل ہی ڈالیں گے ۔