اسلامی ممالک کشمیریوں کی مدد کیلیے اسلامی فوج بھیجیں،شیخ عقیل الرحمن

63

مظفرآباد(وقائع نگار خصوصی) جماعت اسلامی آزاد جموں وکشمیر کے نائب امیر شیخ عقیل الرحمن نے کہا ہے کہ مقبوضہ کشمیر میں مودی کے کرفیو کوتوڑنے کا واحد راستہ حکومت پاکستان جہاد کا اعلان کرے ،80لاکھ کشمیری کرفیو کی ذد میں ہیں جو زندگی اور موت کی کشمکش میں مبتلا ہیں 15لاکھ قابض بھارتی افواج اور آر ایس ایس کے مسلح غنڈے خواتین کی بے حرمتی کررہے ہیں اقوام عالم مذمتی بیان سے آگے بڑھنے کو تیار نہیں ہے اسلامی ممالک کشمیریوں کی مدد کے لیے اسلامی فوج بھیجیں،حکومت پاکستان کشمیر کی آزادی اور کرفیو توڑنے کیلیے عملی اقدامات کرے ،پاک فوج قدم بڑھائے پوری قوم ساتھ ہے ۔ان خیالات کااظہار انہوں نے جمعیت طلبہ عربیہ کے یوم تاسیس کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا ،دریں اثنا شیخ عقیل الرحمن نے جمعیت طلبہ عربیہ کی پر چم کشائی کی۔تقریب سے خطاب کرتے ہوئے شیخ عقیل الرحمن نے کہاکہ مودی نے مقبوضہ کشمیر کو کربلا میں تبدیل کردیا ہے ہٹلر اور یزید مودی کشمیریوں کی محاصرے میں نسل کشی کررہے ہیں ،مقبوضہ کشمیر کے اندر خوراک ،ادویات اور بچوں کے دودھ کی شدید قلت ہے لوگ بھوکے مررہے ہیں بچے بغیر دودھ کے تڑ پ تڑپ کر جان دے رہے ہیں ان حالات میں ہم سب کی ذمے داری ہے کہ سب مل کر عملی اقدامات کریں تا کہ مقبوضہ کشمیر آزاد ہو اور کشمیریوں کو فوری ریلیف مل سکے ۔انہوں نے کہاکہ پاک فوج پہلے سپاہی اور پہلی گولی چلائے آخری سپاہی اور آخری گولی کی نوبت آنے سے قبل نہ صرف کشمیر آزاد ہو گا بلکہ بھارت 17 ریاستو ں میں منقسم ہو جائے گا نریندرمودی بھارت کو ٹکڑے ٹکڑے کرنے کی پالیسی پر عمل پیرا ہیں ۔