سعودی صحافی جمال خاشقجی کے مبینہ قتل کے حوالے سے ترکی کے اخبار کی ایک تازہ رپورٹ

83

  برطانوی نشریاتی ادارے بی بی سی کے مطابق ترکی کے مقامی اخبار کا کہنا کہ سعودی صحافی جمال خاشقجی کا سر بیگ  میں ڈال کر ان کا دم گھوٹا گیا۔ 

ترکی کے اخبار کی ایک تازہ رپورٹ میں جمال خاشقجی کی مبینہ آڈیو ریکارڈنگ کی تفصیلی معلومات بھی شامل کی گئی ہیں۔  

ترک اخبار کی رپورٹ کے مطابق جمال خاشقجی قونصلیٹ کے اندر آئے تو انہیں بتایا گیا کہ انہیں انٹرپول کے ایک آرڈر کی وجہ سے ریاض واپس جانا پڑے گا البتہ جمال خاشقجی نے اس ہدایت کو ماننے سے انکار کردیا جس پر انہیں ایک نشہ آور چیز دی گئی۔ 

رپورٹ کے مطابق جمال خاشقجی نے اپنے آخری الفاظ میں اپنے قاتل سے کہا کہ ان کا منہ بند نہ کریں کیونکہ انہیں دمہ کا مرض ہے جس کے بعد وہ بے ہوش ہوگئے۔ 

خیال رہے کہ سعودی صحافی جمال خاشقجی گزشتہ سال دو اکتوبر کو استنبول میں واقع سعودی سفارتخانے گئے اور پھر لاپتہ ہوگئے تھے۔