حکومت مخالف دھرنا ،فضل الرحمن کے سیاسی رہنماؤں سے رابطے

53

پشاور(خبر ایجنسیاں) جمعیت علمائے اسلام (ف) کے قائد مولانا فضل الرحمان نے اکتوبر میں اسلام آباد لاک ڈائو ن دھرنے کے لیے سیاسی رابطوں کا آغاز کرتے ہوئے مسلم لیگ ن، پیپلز پارٹی اور اے این پی سمیت تمام اپوزیشن جماعتوں کو حکومت مخالف دھرنے میں شرکت کی دعوت دینے کا فیصلہ کیا ہے۔مولانا فضل الرحمان نے شیرپائو سے ملاقات،اسفندیار سے رابطہ کیا۔ محرم الحرام کے بعد بلاول ، محمود اچکزئی، سراج الحق اور حاصل بزنجو کے ساتھ رابطے کا فیصلہ کیا ہے جب کہ نواز شریف نے کیپٹن صفدر کے ذریعے مولانا کو دھرنے کی حمایت کا پیغام دیا ہے۔دھرنے کی تاریخ کا اعلان کر نے کے لیے 18 اکتوبر کو مجلس عاملہ کا اجلاس طلب کرلیا ہے، 19 اکتوبر کو مظفرآباد میں جلسہ عام ہوگا۔اسلام آباد دھرنے کے دوران حکومت کے خاتمے، وزیراعظم کے استعفے اور90 دنوں میں نئے انتخابات کے انعقاد کا مطالبہ کیا جائیگا جبکہ حکومت کے خاتمے تک دھرنا جاری رہے گا۔جمعیت علماء اسلام نے حکومت کے خلاف فیصلہ کن رائونڈ کا آغاز کرتے ہوئے حکومت کے خاتمے تک اسلام آباد میں دھرنا دینے کا اعلان کیاہے جس کے لیے ملک گیر تیاریوں کا سلسلہ جاری ہے۔ جمعیت کی مجلسِ عاملہ کی جانب سے صوبہ بھر میں کارکنوں اور عوام کو منظم و متحرک کرنے کے لیے دوروں کا سلسلہ مکمل کرلیاگیا ہے۔دھرنے کے انتظامات کے لیے مختلف کمیٹیاں بھی قائم کی گئی ہیں۔علاوہ ازیںجمعیت علماء اسلام کے مرکزی امیر مولانا فضل الرحمان نے کہاہے کہ حکومت نے کشمیر انڈیا کے حوالے کر دیا ہے اور اب کشمیریوں کے زخموں پر نمک پاشی کے لیے آئے روزلوگوں کو ریلیاں نکالنے کے احکامات دے رہی ہے۔اسلام آباد لاک ڈاؤن کا فیصلہ اٹل ہے اور کسی بھی صورت احتجاج سے پیچھے نہیں ہٹیں گے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے جمعیت علماء اسلام پی کے53مردان کے رہنما اور سابق ممبر محمد اقبال اعوان کے بھائی محمد الیاس اعوان کی رسم نکاح تقریب کے موقع پر کیا۔مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ اسلام آباد دھرنے کے انتظامات کے لئے مختلف کمیٹیاں بنائی گئی ہے ۔انہوں نے کہاکہ دھرنے والوں کو کنٹینر فراہم کرنے والے لوگ اب کدھر چھپ گئے ہیں۔عمران خان فوری طور پر استعفا دیں بصورت دیگر اسلام آباد لاک ڈاؤن سے انہیں چھپنے کی جگہ بھی نہیں ملے گی۔انہوں نے کہاکہ اپنوں کو نوازنے کے لیے حکومت نے 300ارب روپے کے قرضے معاف کر دیے اب عوام کے آنکھوں میں دھول ڈالنے کے لئے آرڈیننس کے واپس لینے کی باتیں ہو رہی ہے۔انہوں نے کہاکہ عوام حکومت کی اصلیت سے باخبر ہے اور اکتوبر میں اپنے گھروں سے نکل کر یہودی ایجنٹ کو ملک بدر کرنے پر مجبور کرے گی۔مولانا فضل الرحمان نے کہاکہ اسلام آباد لاک ڈاؤن کے لیے دیگر سیاسی جماعتیں بھی رابطے میں ہیں ۔
فضل الرحمان رابطے