حسینی مشن پر چلنا قربِ رسول ﷺ کے حصول کا بہترین ذریعہ ہے

58

لاہور (نمائندہ جسارت) تحریک لبیک یا رسول اللہﷺ اورتحریک صراط ِمستقیم کے زیر اہتما م جامعہ جلالیہ مظہر الالسلام داروغہ والا لاہور میں سالانہ مرکزی فکرحضرت حسین ؓ کانفرنس کا انعقاد کیا گیا۔ تحریک لبیک یارسول اللہ ﷺکے سربراہ اور تحریک صراط مستقیم کے بانی ڈاکٹر محمد اشرف آصف جلالی نے کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ سیدنا حسینؓ خوشبو ئے رسول ﷺ اور غلبہ دین کا اصول تھے ۔حسینی مشن پر چلنا قربِ رسول ﷺ کے حصول کا بہترین ذریعہ ہے۔ حضرت حسین ؓ کی یہ تاریخی فتح ہے کہ ہمیشہ کیلیے باطل کے خلاف حق پرستوں کی جدو جہد کو حسینیت کہا جاتا ہے ۔انہوں نے کہاتربیت مصطفیﷺ اور آغوش مرتضیٰؓ نے آپ کی شخصیت چمکانے میں اہم کردار ادا کیا۔ آپ حد درجہ کے ذہین، قرآنی اسرارو رموز کے ماہر، نابغہ روز گار، محدث، صف شکن مجاہد اور بصیرت و فراست کے شاہکار قائد تھے ۔ آپ زہد و تقویٰ کی دستار اور ولایت و معرفت کا معیار تھے۔ آپ راہ عزیمت کے مسافر اور غیرت دین کے ترجمان تھے آپ نے یزیدی فتنے کا بر وقت ادراک کیا اور اس سے نمٹنے میں سبقت کی ۔اسلامی شعائر کے فروغ اور اسلامی حدود کے تحفظ کے لیے آپ نے کربلا کا راستہ اختیار کیا ۔آپ کا مقصد ہرگز اقتدار نہیں تھا بلکہ آپ دین مصطفی ﷺ کو اقتدار میں لانا چاہتے تھے، دین کو بحفاظت آئندہ نسلوں تک پہنچانے کے لحاظ سے آپ ملت کے بہت بڑے محسن ہیں ۔ تحریک صراط مستقیم لاہور کے امیر مولانا محمد صدیق مصحفی نے کہا حسینیت قیامت تک نیا رنگ دکھاتی رہے گی اور مولانا محمد فیاض جلالی نے کہا کہ حق کے علمبراد ہمیشہ راہ کربلا کے مسافر رہیں گے ۔ کانفرنس میںقاری محمد اصغر ترابی،علامہ محمد طاہر نواز قادری،علامہ محمدفرمان جلالی،علامہ محمدرضاالمصطفیٰ رازی،مولانااحمد حسن فاروقی،قاری عمرفاروق،علامہ محمدوقار نقشبندی اورڈاکٹر محمد عمران جلالی خصوصی طور پر شریک ہوئے۔کانفرنس کے آخرمیں تمام شہدا کربلا کو خراج تحسین پیش کیا گیا اور ان کی ارواح کو ایصال ثواب بھی کیا گیا۔