حکومت کو گھر بھیجنا مسائل کا واحد حل ہے،ن لیگ

80
اسلام آباد: مسلم لیگ ن کے سیکرٹری جنرل احسن اقبال پریس کانفرنس کررہے ہیں، مریم اورنگزیب اور محمد زبیر بھی موجود ہیں

اسلام آباد(نمائندہ جسارت) مسلم لیگ (ن) نے وزیراعظم عمران خان اور وفاقی وزرا کے نام ای سی ایل میں شامل کرنے کا مطالبہ کردیا۔اسلام آباد میں مسلم لیگ (ن) کے دیگر رہنماؤں کے ساتھ پریس کانفرنس کے دوران احسن اقبال نے کہا کہ کشمیر پاکستان کی شہ رگ ہے لیکن وزیر اعظم اور وزیر خارجہ کشمیر کے معاملے پر سرگرم نظر نہیں آرہے، کشمیر کے معاملے پر وزیراعظم کو بیرون ممالک کے دورے کرنے چاہییں ۔ وزیرخارجہ آئے دن مریدوں کے جھرمٹ میں پریس کانفرنس کرتے نظر آتے ہیں لیکن انہوں نے چین کے علاوہ کسی ملک کادورہ نہیں کیا، سنا ہے کہ بھارت کے لیے پاکستان کی فضائی حدود بند کی جارہی ہے، لگتا ہے حکومت کو سمجھ نہیں آرہا کہ مسئلہ کشمیر پر کیا کرنا ہے۔احسن اقبال نے کہا کہ نئے پاکستان کا نعرہ فراڈ ثابت ہوا ہے، حکومت کے پاس کوئی پلان نہیں، روپے کی قدر میں 40 فیصد کمی سے کئی ہزار ارب کا قرضہ بڑھا، موجودہ حکومت نے ملکی معیشت کو ریڈزون میں داخل کردیا، حکومتی اقتصادی پالیسیوں نے معیشت کو بریک لگادی ہے، حکومت ٹیکس جمع کرنے میں ناکام اور بے بس نظر آتی ہے، دنیا میں کوئی ایسی مثال نہیں ملے گی، معیشت ایک سال میں ساڑھے 3 فیصد گر جائے۔رہنما (ن) لیگ کا کہنا تھا کہ ایک سال میں پاکستان کا بجٹ خسارہ 8.9 فیصد تک پہنچ گیا، ٹیکسوں کی وصولی نہ ہونے پر قرضوں پر انحصار کرنا پڑتاہے، حکومت نے ایک سال میں 10 ہزار ارب روپے قرض لیے ہیں،اتنے قرضے ہم نے 5 سال میں لیے۔حکومت نے شرح سود میں بے پناہ اضافہ کیا جس سے معیشت کا بیڑاغرق کیا گیا، ایک سال میں بیرونی سرمایہ کاری میں 50 فیصد کمی واقع ہوچکی ہے۔ حکومتی اخراجات بڑھ رہے ہیں لیکن آمدنی میں اضافہ نہیں ہورہا۔ صنعتی سیکٹر میں ترقی رْک گئی ہے اور کارخانے بند ہوگئے ہیں۔اپوزیشن رہنما کا کہنا تھا کہ سلیکٹڈ کا وقت گزر گیا عمران خان اب ریجکٹڈ وزیر اعظم ہیں، حکومتی پالیسیاں ملکی سلامتی کیلیے خطرہ ہیں، موجودہ حالات میں حکومت کو گھر بھیجنا مسائل کا واحد حل ہے۔ اپوزیشن جماعتیں اس پر متفقہ لائحہ عمل بنا رہی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ چودھری نثار کے پارٹی میں واپس آنے کا کوئی علم نہیں، چودھری نثار کہہ چکے ہیں کہ انہوں نے پارٹی چھوڑ دی ہے۔مسلم لیگ (ن) کی مرکزی ترجمان مریم اورنگزیب کا کہنا تھا کہ حکومت اپنی نااہلی نا لائقی پر بھنگڑے ڈال رہی ہے، تاریخی اعدادو شمار کے باوجود قرضے میں کمی نہیں کر سکی، عمران خان چور ہیں اس لیے لوگوں نے ٹیکس دینا چھوڑ دیا۔ ایک سال میں 20 لاکھ لوگ بے روزگار ہو گئے، اسپتالوں میں مفت ادوایات کی سہولت ختم کر دی گئیں۔مریم اورنگزیب کا کہنا تھا کہ کاغذات لہرا کر وزرا کرپشن کا نیا ڈرامہ رچانا چاہتے ہیں، عدالتوں میں ثبوت کی بجائے واٹس ایپ پر جج تبدیل ہوتے ہیں، دوسروں پر چوری کا الزام لگانے والے ڈاکو ہیں، ان ڈاکوؤں کو ملک پر ڈاکا نہیں ڈالنے نہیں دیں گے، وزیر اعظم سمیت تمام وزراء کے نام ای سی ایل میں شامل کیے جائیں۔
ن لیگ