فیس بک انتظامیہ نے بھارت مخالف وڈیوز بلاک کرناشروع کردیں

90

لزبن (آن لائن) فیس بک انتظامیہ بھی بھارت کی حمایت میں نکل پڑی‘ مقبوضہ جموں و کشمیر کی آئینی و قانونی حیثیت کو ختم کرنے اور انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کے خلاف یورپ بھر میں منعقد ہونے والے احتجاج کی وڈیوز فیس بک انتظامیہ نے بلاک کرنا شروع کر دی ہیں‘ یہ احتجاج پاکستانی و کشمیری عوام کی جانب سے کیا جا رہا ہے اور وہ اس کو اپنی فیس بک آئی ڈی یا پیج پر براہ راست دکھا کر یا وڈیو اپ لوڈ کر کے عالمی دنیا کی توجہ حاصل کر رہے ہیں‘ فیس بک انتظامیہ نے بلاک کی جانے والی وڈیوز اور پیج بلاک کیے جانے کے اقدام پر اپنا بیان جاری نہیںکیا ہے جبکہ ماہرین کا کہنا ہے کہ سوشل میڈیا اور ٹیکنالوجی میں بھارت کافی حد تک پاکستان سے آگے ہے اوربھارت اپنا مکرو چہرہ چھپانے کے لیے ایسی وڈیوز اور پیج کی رپورٹ فیس بک انتظامیہ کودے کر بلاک کروا رہا ہے اور فیس بک انتظامیہ ایک رپورٹ پر بنا کسی قسم کی انکوائری اور چیکنگ کے وڈیوز کو بلاک کر دیتی ہے ۔