حیدرآباد:جرم ثابت ہونے پر قاتل کو سزائے موت وجرمانے کی سزا

87

حیدرآباد(اسٹاف رپورٹر) قتل کے مقدمے میں جرم ثابت ہونے پر ملزم کو سزا موت اور 5لاکھ روپے جرمانے کی سزا ‘ ٹرائل کورٹ فورٹھ سیشن جج حیدرآباد ایاز مصطفی جوکھیو کی عدالت نے قتل کے مقدمے میں نامزد ملزم کاشف کو جرم ثابت ہونے پر سزا موت(پھانسی) سنائی اور 5لاکھ روپے جرمانے کی سزا سنائی ہے جبکہ جرمانے کی عدم ادائیگی پر مزید 6 ماہ قید کاٹنا ہوگی اور مقدمے میں ملوث دوسری
ملزمہ سروری بیگم کو بری کرنے کا حکم سنایا ہے 20اگست2013ء کوبی سیکشن تھانے پر لیاقت حسین ولد غلام حسین نے مقدمہ درج کرایا تھا جس میں ملزم کاشف نور الٰہی اور مسماۃ سرور نور الہی پر الزام لگایا تھا کہ ملزمان نے چاقو سے وارکرکے اسکی 27سالہ بیٹی کو قتل کیا ہے ۔
سزائے موت و جرمانہ