مقابلے کے دوران چوٹ لگنے سے باکسر چل بسا

77

ماسکو(جسارت نیوز)نوجوان روسی باکسر میکسم دیداشیف دورانِ فائٹ اپنے حریف کی جانب سے سر پر ہوتے تابڑ توڑ حملوں کے باعث شدید زخمی ہو گئے اور دورانِ علاج چل بسے۔غیر ملکی میڈیا رپورٹس کے مطابق گزشتہ جمعے کو ہونے والی باکسنگ فائٹ کے دوران سبریئل احمد میٹیس میتھیئو نے روسی باکسر میکسم دیداشیف کے سر پر کئی مکے مارے، جس کی وجہ سے ٹرینر نے 11ویں رائونڈ میں باٹ ختم کرائی، واپس جاتے ہوئے دیداشیف شائقین کے سامنے گر پڑے۔28سالہ میکسم دیداشیف کے سر پر گہری چوٹ آئی تھی ، دماغ میں سوجن کے باعث سرجن نے دائیں جانب کی کھوپڑی کا ایک حصہ کاٹ کر الگ کر دیا تھا۔میکسم دیداشیف کو یو ایم پرنس جارج سینٹراسپتال میں شدید زخمی حالت میں لے جایا گیا تھا، دماغ کی سرجری کے بعد وہ کوما کی حالت میں چلے گئے جس کے بعد زندگی سے جنگ ہار بیٹھے۔