بلوچستان: فورسز سے جھڑپ میں 3 دہشت گرد ہلاک،2گرفتار

67

کوئٹہ (نمائندہ جسارت)بلوچستان کے ضلع پنجگور میں سیکورٹی فورسز کے ساتھ جھڑپ میں کالعدم تنظیم کے 3 مبینہ دہشت گرد ہلاک اور 2زخمی حالت میں گرفتار، جھڑپ میں سیکورٹی اہلکار بھی شہید اور ایک زخمی ہوگیا۔ تفصیلات کے مطابق حساس ادارے اور ادارے نے دہشت گردوں کی نقل و حرکت کی خفیہ اطلاع پر پنجگور کے علاقے کوئٹہ ناکہ پر مسافر بس کو روکا۔ سیکورٹی اہلکار جب بس سے مسافروں کو چیکنگ کے لیے نیچے اتار رہے تھے اس دوران بس کے عقبی جانب موجود 4سے 5دہشت گردوں نے اہلکاروں پر فائرنگ کردی جس سے ایف سی اہلکار پذیر اللہ زخمی ہوگیا۔ اس دوران ایف سی اہلکاروں نے ایک جونیئر افسر کو یرغمال بنالیا اور قریب واقع چیک پوسٹ تک لے گئے ۔ صورتحال کو دیکھتے ہوئے ایف سی کے اسپیشل آپریشن ونگ اور کوئیک رسپانس فورس کو طلب کیا گیا جنہوں نے دہشت گردوں کو چاروں طرف سے گھیرے میں لے لیا۔اس دوران فائرنگ کا تبادلہ ہوا جس میں3 دہشت گرد مارے گئے جبکہ ان کے 2 ساتھی زخمی ہوگئے جنہوں نے بعد ازاں خود کو سرنڈر کردیا۔ ملزمان کی فائرنگ سے ایف سی127ونگ کے نائب صوبیدار قمر عباس شہید ہوگئے۔ ہلاک ملزمان کی شناخت خالد ،ناہین اللہ اور شامیر کے نام سے ہوئے ۔ تینوں کراچی کے رہائشی تھے۔ گرفتار کیے گئے ملزمان کا تعلق بھی کراچی سے بتایا جاتا ہے ۔