عمران خان ٹرمپ ملاقات سے خیر کی توقعات نہ باندھی جائیں،سراج الحق

95

لاہور (نمائندہ جسارت)امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹرسراج الحق نے کہا ہے کہ وزیر اعظم پاکستان اور امریکی صدر کی ملاقات سے زیادہ توقعات وابستہ نہ کی جائیں۔ کل کی ملاقات دو ریاستوں کے درمیان معمول کا رابطہ ہے۔ ان خیالات کااظہارانہوں ایک بیان میں کیا۔انہوں نے کہا کہ عمران خان کو کسی غلط فہمی میں نہیں رہنا چاہیے، امریکی صدر کا رویہ اسی وقت دوستانہ ہوتا ہے جب دوسرا ان کی منشاکے مطابق چل رہا ہو۔افغانستان میں ہزیمت اْٹھانے کے بعد اْس کو پاکستان کی ضرورت ہے۔ عمران حکومت کا فرض ہے کہ وہ اس موقع پر امریکی صدر پر زور دے کہ وہ مسئلہ کشمیر اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق حل کرانے میں پاکستان کا ساتھ دے۔ کشمیریوں کو حق خودارادیت دیے بغیرکوئی حل جنوب مشرقی ایشیا کو پرامن خطہ بنانے کی ضمانت نہیں دے سکتا۔ اگر امریکی صدر مخلص ہیں تو اقوام متحدہ کے زیر اہتمام استصواب رائے کے لیے کام کریں۔ انہوں نے کہاکہ وزیر اعظم مودی بھارتی عوام کو مشکل میں نہ ڈالیں اور پورے بھارت کو تباہی سے بچائیں۔ انہوںنے کہاکہ جماعت اسلامی کشمیریوں کی ہر قسم کی سیاسی، اخلاقی اور سفارتی حمایت جاری رکھے گی۔