وینزویلن صدر سے مصافحے کے دوران ایرانی وزیر خارجہ کا ہاتھ ٹوٹنے سے بچ گیا

67

کراکس (انٹرنیشنل ڈیسک) وینزویلا کے دورے پر موجود ایرانی وزیر خارجہ جواد ظریف کا ہاتھ صدر نکولاس مادورو سے مصافحے کے دوران ٹوٹنے سے بچ گیا۔ صدارتی محل میں جواد ظریف کے استقبال میں قریب تھا کہ وہ مہمان کے ہاتھ کی ہڈی توڑ ڈالتے۔ ملاقات میں مادورو نے مزاحاً انہیں ڈرون طیارہ قرار دیا۔ وزیر خارجہ مصافحے کے دوران تکلیف کی شدت کو ہنس کر چھپانے پر مجبور ہو گئے۔