سندھ: نہروں کا پانی روکنے والوں کیخلاف محکمہ آبپاشی کی کارروائی

32

کراچی(اسٹا ف رپورٹر)وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ کی ہدایت پر محکمہ آبپاشی نے غیرقانونی آئوٹ لیٹس کے خلاف آپریشن شروع کردیا ہے تاکہ ا ٓخری سرے تک مناسب طور پر پانی کوتقسیم کیا جا سکے۔رائیٹ بینک کینال لاڑکانہ کے چیف انجینئرسعید جاگیرانی نے وزیراعلیٰ سندھ کو اپنی رپورٹ میں بتایا ہے کہ انہوں نے غیرقانونی موڈیولز،آئوٹ لیٹس کی ٹیمپرنگ کے خلاف کارروائی شروع کردی ہے کیونکہ متعدد نہروں کو ان کے حصے کا پانی نہیں مل رہا تھا۔وزیراعلیٰ سندھ کی خصوصی ہدایت پر محکمہ آبپاشی نے ضلعی
انتظامیہ،سندھ پولیس اور پاکستان رینجرز کے ساتھ ملکر مختلف مراحل میں شروع کیے گئے آپریشن کے حوالے سے بھرپور تعاون کیا۔پہلے مرحلے میں تمام غیر قانونی موڈیولز اور آئوٹ لیٹس کو سیف اللہ کینال، دھامرا کینال سے ختم کیا گیا اور پانی کو نہروں میں چھوڑ دیا گیا جسے پانی چوری کے ذریعے اس کا رخ موڑنے کی کوشش کی جارہی تھی،اسی طرح کاآپریشن کھیرتھر کینال اور وارہ کینال اور اس کے بعد دادو کینال اور میہڑبرانچ میں بھی کیا گیا،اب آبادگار نہروں کے دائیں کنارے پر اپنی خریف کی فصلوں کے لیے اپنے حصے کا مکمل پانی حاصل کر رہے ہیں ۔