سندھ اسمبلی کا اجلاس ایک گھنٹے 50 منٹ کی تاخیر سے شروع

102

کراچی ( اسٹاف رپورٹر )سندھ اسمبلی کا اجلاس جمعہ کو ایک گھنٹے 50منٹ کی تاخیر سے ڈپٹی اسپیکر ریحانہ لغاری کی زیر صدارت شروع ہوا۔ کارروائی کے آغاز میں پی ٹی آئی کے رکن اسمبلی خرم شیرزمان نے کورم کی نشاندہی کی اس وقت ایوان میں موجود ارکان کی تعداد خاصی کم تھی۔ خرم شیر زمان نے حکومت پر طنز کرتے ہوئے کہا کہ ہمیں احساس ہے کہ آپ کے تمام اراکین گھوٹکی کے انتخابات میں مصروف ہیں۔انہوں نے مزید کہا کہ آج جمعہ کا دن ہے اور نماز جمعہ کا وقت ہورہا ہے آپ اس کے لیے وقفہ دیں یا جمعہ کا اجلاس نماز کے بعد کریں۔ جس پر ڈپٹی اسپیکر نے کہا کہ ٹھیک ہے، آپ نے ایشو نوٹ کرادیا آپ تشریف رکھیں، ڈپٹی اسپیکر نے وقفہ سوالات کا اعلان کردیا۔اجلاس میں ڈپٹی اسپیکر ریحانہ لغاری اور اراکین نے سابق اسپیکر سندھ اسمبلی آغا بدرالدین کی اہلیہ اور موجودہ اسپیکر کی چچی کے انتقال پر دعائے مغفرت کرائی، بلوچستان کے علاقے وندر حادثے میں حلقے کے 6افراد کی ہلاکت ، بھریا سٹی میں بس حادثے میں 35 افراد کے زخمیوں کی صحت یابی اور لاڑکانہ میں ایڈز کا شکاربچی اسما کی ہلاکت پر ایوان میں دعائے مغفرت کی گئی۔ جی ڈی اے کے نند کمار نے سانگھڑ میں کتے کے کاٹنے سے ایک خاتون کی ہلاکت پر دعائے مغفرت کی۔ اجلاس میں وزیر محنت مرتضیٰ بلوچ نے سابق ایم پی اے شیر محمد بلوچ کی صحت یابی کے لیے دعا کی درخواست کی جبکہ ایم کیوایم کی رابعہ خاتون نے نامور شاعر حمایت علی کے ایصال ثواب کے لیے دعائے مغفرت کرائی۔