نیب نے شاہد خاقان کی گرفتاری کی خواہش پوری کردی،فردوس عاشق

94

لاہور/اسلام آباد (نمائندہ جسارت/اے پی پی ) وفاقی معاون خصوصی برائے اطلاعات ونشریات ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے کہ شاہد خاقان عباسی کی توخواہش تھی کہ انہیں گرفتارکیا جائے،نیب نے ان کی یہ خواہش پوری کردی، انہوں نے ضمانت قبل ازگرفتاری نہیں کرائی تھی۔انہوں نے یہ بات صدر ن لیگ شہباز شریف کی پریس کانفرنس پر ردعمل دیتے ہوئے کہی۔ فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ آج یہ دھڑی اور دھیلے کی بات کررہے ہیں،ان کی دھڑی سے مطلب کھرب اور دھیلے سے مطلب ارب ہے، قانون کی عملداری پر ان کے چہرے زرد ہوجاتے ہیں۔ جوشخص نیب کا ملزم ہو وہ ضمانت کراتا ہے یا قانونی چارہ جوئی کرتا ہے،بے گناہ ثابت ہونے کا فورم عدالتیں ہیں ۔ شہباز شریف میڈیا کے بجائے اپنی صفائی عدالتوں میں دیں۔ انہوں نے کہا کہ پی ٹی آئی حکومت کے وزیربلدیات نیب کے ہاتھوں گرفتارہوئے او قانونی پراسس کے بعد رہا ہوئے۔ وزیر جنگلات بھی گرفتار ہوا اور اس وقت نیب کی حراست میں ہے۔ ن لیگ کے دور میں کوئی ایک مثال بتا دیں جس میں وزیر گرفتار ہوا ہو۔ ذرائع کے مطابق دوران اجلاس وزیراعظم نے شاہد خاقان کی گرفتاری کی خبر پر کہا کہ قانون سے کوئی بالا تر نہیں۔ حکومت اداروں کے کام میں کسی طرح کی مداخلت نہیں کرے گی۔علاوہ ازیں فردوس عاشق اعوان نے اپنے ٹوئٹ میں کہا کہ چوروں کے 100 دنوں کے بعدشاہ کا ایک دن آن پہنچا ہے، مال مسروقہ کی برآمدگی کی ایک اور قسط قوم کو مبارک ہو، لوٹے مال کی واپسی کا خواب حقیقت بن رہا ہے، لٹیروں کی صفوں میں بوکھلاہٹ اور افراتفری پھیل چکی ہے۔