کالعدم جماعت الدعوۃ کے سربراہ حافظ سعید گرفتار،ریمانڈ پر جیل منتقل

116

لاہور،واشنگٹن (نمائندہ جسارت،خبر ایجنسیاں) سی ٹی ڈی پنجاب نے کالعدم تنظیم جماعت الدعو ۃکے سربراہ حافظ سعید کو گرفتار کرلیا ہے۔ حا فظ سعید کو جو ڈیشل ریما نڈ پر جیل بھیج دیا گیا ہے ۔ترجمان سی ٹی ڈی کی جانب سے جاری بیان کے مطابق کالعدم تنظیم جماعت الدعوۃکے سربراہ حافظ سعید کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔ حافظ محمد سعید لاہور سے گوجرانوالہ جارہے تھے۔حکومت کی جانب سے جماعت الدعوۃ اور فلاح انسانیت فاؤنڈیشن پر پابندی کا اعلان کیا گیا تھا جب کہ یکم جولائی کو حکومت نے حافظ سعید اور ان کے دیگر 6 ساتھیوں کے خلاف لشکر طیبہ کا سربراہ ہونے اور دہشت گردی میں ملوث کے الزامات میں مقدمات درج کیے۔ ان پر دہشت گردی کو پروان چڑھانے اور دہشت گردوں کی مالی معاونت کیلیے فنڈز اکٹھا کرنے کے الزامات ہیں۔حافظ سعید نے اپنے خلاف درج دہشت گردی کے مقدمات پر لاہور ہائیکورٹ سے رجوع کیا تھا۔ عدالت میں دائر درخواست میں انہوں نے موقف اپنایا تھا کہ ان پر درج ایف آئی آرز ختم کی جائیں، حافظ سعید کا لشکر طیبہ کے ساتھ کوئی تعلق نہیں ہے۔ ان کا القاعدہ یا ایسی کسی تنظیم سے بھی کوئی تعلق نہیں ہے۔ وہ ریاست کے خلاف اقدامات میں ہرگز ملوث نہیں ہیں۔ انڈین لابی کا حافظ سعید پر ممبئی حملوں میں ملوث ہونے بیان حقائق کے منافی ہے۔ واضح رہے کہ حافظ سعید پہلے بھی متعد د بار گرفتار ہو چکے ہیں لیکن عدالت میں ان کے خلا ف کو ئی ثبوت پیش نہ کیا جا سکا جس کے باعث ان کو عدالت نے متعدد بار رہا کر نے کے احکا مات جا ری کر چکی ہے ۔دریں اثناء امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کالعدم جماعت الدعوۃ کے امیر حافظ سعید کی گرفتاری کا خیر مقدم کیا ہے۔ اپنی ٹوئٹ میں ڈونلڈ ٹرمپ کا کہنا تھا کہ 10 سال کی تلاش کے بعد ممبئی حملوں کے نام نہاد ماسٹر مائنڈ کو پاکستان میں گرفتار کرلیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ گرفتاری 10 سال کی تلاش کے بعدعمل میں آئی۔ ان کی تلاش کیلیے 2 برسوں سے دباؤ ڈالا جارہا تھا۔