جیکب آباد ،پی پی(س ب ) کا بجلی کی لوڈشیڈنگ کیخلاف دھرنا

89

جیکب آباد (نمائندہ جسارت) پی پی ش ب کا جیکب آباد میں غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ اور پانی کی قلت کیخلاف احتجاجی مظاہرہ، شہر کے راستوں پر مارچ، دھرنا، روڈ بلاک۔ پاکستان پیپلز پارٹی ش ب کی کال پر محنت کشوں اور شہریوں کی جانب سے شہر میں بجلی کی غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ، ٹرپنگ اور پینے کے پانی کی قلت کیخلاف ایک زبردست احتجاجی مظاہرہ ضلعی صدر ندیم قریشی، لیبر یونین کے نور محمد منجھو، نذر محمد بروہی، فیض کھوسو، منظور بھٹو، نذیر لاشاری، قربان ہانبی اور دیگر کی قیادت میں نکالا گیا، جس میں شہریوں اور کارکنان نے بڑی تعداد میں شرکت کی۔ مظاہرین نے شہر کے راستوں پر مارچ کیا اور نعرے بازی کرتے ہوئے ڈی سی چوک پر دھرنا دے کر بیٹھ گئے، جس کے باعث روڈ بلاک اور ٹریفک معطل ہوگئی اور گاڑیوں کی لمبی قطاریں لگ گئیں۔ مظاہرین کے ہاتھوں میں بینر اور پلے کارڈ تھے جن پر نعرے درج تھے، مشتعل مظاہرین نے ٹائر نذر آتش کیے۔ اس موقع پر رہنمائوں نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ جیکب آباد ایشیا کا گرم ترین شہر ہے، جہاں گرمی کا درجہ حرارت 51 ڈگری تک ہوتا ہے پر سیپکو کی جانب سے شدید گرمی میں شیڈول کے علاوہ بھی بجلی بند کرکے شہریوں کو ذہنی مریض بنا دیا ہے۔ اسپتال میں مریض تڑپ رہے ہیں اگر لوڈشیڈنگ پر کنٹرول نہ کیا گیا تو سیپکو آفس کا گھیرائو کیا جائے گا۔ رہنمائوں نے شہر میں پینے کے پانی کی قلت پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ شہریوں کو جلد پینے کا پانی فراہم کیا جائے، منگل سے سیپکو کیخلاف بھوک ہڑتال اور احتجاج کرنے کا اعلان کیا گیا۔