مقبوضہ کشمیر ،بھارتی فوجی آپریشن کے نام پر مزید 4 نوجوان شہید

70

سرینگر (اے پی پی) مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوجیوں نے اپنی ریاستی دہشت گردی کی تازہ کارروائی میں ضلع شوپیاں میں 4 کشمیری نوجوانوں کو شہید کردیا۔ کشمیر میڈیا سروس کے مطابق فوجیوں نے نوجوانوں کو ضلع شوپیاں کے علاقے درم ڈورہ کیگام میں محاصرے اور تلاشی کی ایک کارروائی کے دوران شہید کیا۔ شہید نوجوانوں کی شناخت شوکت احمدمیر ،آزاد احمد کھانڈے ،سہیل یوسف بٹ اوررفیع حسن میرکے طورپر ہوئی ہے۔ قابض انتظامیہ نے ضلع میں انٹرنیٹ سروس معطل کردی۔ بھارتی فوجیوں نے گزشتہ روز ضلع بارہمولہ کے علاقے اڑی میں بھی اسی طرح کی ایک کارروائی میں ایک نوجوان کو شہید کیا تھا۔ بھارتی فورسز نے ضلع گاندربل میں کنگن کے علاقے چارون میں بھی محاصرے اور تلاشی کی کارروائی کی۔ محمد اشرف صحرائی، مشتاق الاسلام اور ڈیموکریٹک فریڈمپارٹی سمیت حریت رہنمائوں اور تنظیموں نے اپنے بیانات میں شہید نوجوانوں کو شاندار خراج عقیدت پیش کیا ہے۔ محمد اشرف صحرائی نے کہا کہ اگر بھارت یہ سمجھتا ہے کہ وہ تنازع کشمیر کو طاقت کے وحشیانہ استعمال کے ذریعے حل کر سکتا ہے تویہ اس کی بھول ہے۔ انہوں نے بھارت پرزوردیا کہ وہ ہٹ دھرمی پر مبنی رویہ ترک کرے اوردیرینہ تنازع کوکشمیریوں کی خواہشات کے مطابق مذاکرات کے ذریعے پرامن طریقے سے حل کرے۔ ادھر جموں خطے کے ضلع ریاسی میںمہور کے علاقے ہری والا میں ایک اسکول ٹیچر فاروق احمد ڈارکی لاش ایک درخت سے لٹکی ہوئی پائی گئی۔ جموں خطے میں اکثر ہندو انتہا پسند مسلمانوں کو اغواکرکے انہیں بہیمانہ طریقے سے قتل کرتے ہیں۔