کرپٹ سندھ حکومت کے جانے کا وقت آگیا،جی ڈی اے

48

کراچی ( نمائندہ جسارت ) گرینڈ ڈیموکریٹک الائنس ( جی ڈی اے) کے ارکان سندھ اسمبلی نصرت سحر عباسی، شہریار خان مہر اور نند کمار گوکلانی نے وزیراعلیٰ سندھ کے مشیر مرتضیٰ وہاب کی جی ڈی اے کے خلاف ہرزا سرائی پر اپنے بیان میں کہا ہے کہ ایک غیر منتخب مشیر کی کوئی جمہوری حیثیت نہیں ہے ، جی ڈی اے کیخلاف بیان دینے سے پہلے اپنی حکومت کی بدترین کارکردگی پر بھی لب کشائی فرما لیتے تو اچھا ہوتا ،رہنماؤں نے کہا کہ نااہل سندھ حکومت کی کارکردگی یہ ہے کہ لاڑکانہ میں غریب عوام ایڈز جیسی مہلک بیماری کا شکار ہورہے ہیں پورے صوبے میں صحت عامہ کی ابتر صورتحال، امن وامان اور لاقانونیت کا بازار گرم ہے ترقیاتی کام ناپید ہیں ۔ جی ڈی اے رہنماؤں کا کہنا تھا کہ اب آپکی حکومت کے چل چلاؤ کا وقت ہے ،آپ کے آقا اور لاڑکانہ کی ملکہ قانون کی گرفت میں ہیں آپکے دیگر کرپٹ عناصر بھی قانون کی پکڑ میں آئیں گے پھر یہ وزارت رہے گی نہ مشیر کا عہدہ۔انہوں نے کہا کہ جی ڈی اے اجلاس میں جو بھی فیصلے کیے گئے وہ عوام کے تعاون سے انشاء اللہ پورے ہونگے عوام دشمن حکومت کی برطرفی کا فیصلہ قانون کی بالادستی کو مزید مستحکم کرنے کے لیے کیا گیا ہے کیونکہ بغیر احتساب جمہوریت نہیں چل سکتی اور آپکی کرپٹ حکومت کے ہوتے ہوئے احتساب کا عمل مکمل نہیں ہوسکتا۔
جی ڈی اے