نوابشاہ، پیپلز میڈیکل اسپتال کے ڈاکٹروں کی ہڑتال، درجنوں آپریشن ملتوی

34

نوابشاہ (سٹی رپورٹر) پیپلز میڈیکل اسپتال کے گائینی وارڈ کے ائر کنڈیشنڈ خراب، لیبر روم کے ڈاکٹروں کی ہڑتال، 50 سے زائد آپریشن ملتوی۔ عملہ مریضوں کو واپس بھیجنے لگا۔ سرکاری اسپتال کے لیبر روم کے ائر کنڈیشنڈ گزشتہ ایک ماہ سے خراب ہونے کے باعث ڈیوٹی پر موجود ڈاکٹروں نے ہڑتال کرتے ہوئے مریضوں کا علاج کرنے سے انکار کردیا۔ نوابشاہ، مورو، نوشہرو فیروز، سانگھڑ، شاہ پورچاکر، باندھی سمیت دیگر دور دراز علاقوں سے علاج اور آپریشن کے لیے آنے والی حاملہ خواتین سرکاری اسپتال میں علاج نہ ہونے کے باعث نجی اسپتالوں میں بھاری اخراجات پر آپریشن اور علاج کرانے پر مجبور۔ اسپتال کے عملے نے علاج معالجے کے لیے آنے والے خواتین کو وارڈ میں داخل کرنے سے انکار کردیا۔ جس پر بیشتر مریضوں کے ورثا اور عملے کے درمیان تلخ کلامی لیبر روم کے باہر حاملہ خواتین کے ورثا نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ ہم سرکاری اسپتال میں علاج کرانے کے لیے پہنچے ہیں مگر عملے نے ہمیں گائنی وارڈ میں داخل نہیں ہونے دیا اور ڈاکٹر ہڑتال پر ہیں۔ ہم نجی اسپتالوں میں مہنگا علاج نہیں کراسکتے۔ دوسری جانب گائنی وارڈ کی لیڈی ڈاکٹرز نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ ایک مہینے قبل ہمارے آفس، اسٹاف روم اور لیبر روم سمیت آپریشن تھیٹر کے ائر کنڈیشنڈ خراب ہیں، ٹھنڈے پانی کی مشین بھی خراب ہے، حکام توجہ دیں