غزہ پر اسرائیل کے فضائی حملے‘ ناکا بندی ختم کرنے کا یورپی مطالبہ

35

مقبوضہ بیت المقدس (انٹرنیشنل ڈیسک) غزہ کی محصور پٹی کے جنوب میں اسرائیلی جنگی طیاروں نے زرعی زمینوں پر اچانک حملے کیے، تاہم کسی اس دوران کوئی جانی نقصان نہیں ہوا۔ مرکز اطلاعات فلسطین کے مطابق رفح کے مشرق میں کرم ابو معمر میں زرعی زمینوں پر 2 میزائل فائر کیے گئے، جس کے بعد قابض صہیونی فوج نے دعویٰ کیا کہ یہ کارروائی گزشتہ رات غزہ سے اشکول نامی یہودی بستی پر داغے جانے والے میزائل حملے کے بعد کی گئی ہے، جس میں حماس کے ٹھکانوں کو نشانہ بنایا ہے۔دوسری جانب یورپی یونین نے اسرائیل کی طرف سے فلسطین کے علاقے غزہ کی پٹی پر مسلط کردہ محاصرہ ختم اور فلسطینی دھڑوں میں اتحاد کے قیام کی ضرورت پر زور دیا ہے۔ فلسطینی اراضی کے لیے یورپی یونین کے مبصر رالف طراو نے غزہ میں ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ہم فلسطینی اتھارٹی کے اتحادی ہیں اور اس بات پر زور دیتے ہیں کہ ہمیں فلسطین کے تمام علاقوں بالخصوص غزہ کے حوالے سے مشترکہ اقدامات کرنا ہوں گے۔انہوں نے کہا کہ غزہ کی پٹی پر اسرائیل کی طرف سے 12 سال سے بلا جواز معاشی پابندیاں عائد ہیں۔