زیر تعمیرغیر قانونی عماتریں منہدم کرنے کا فیصلہ فہرست تیار

42

 

کراچی(اسٹاف رپورٹر) کمشنر کراچی افتخار شالوانی کی زیر صدارت اجلاس میںشہر میں غیر قانونی زیر تعمیر عمارتوں کو جن میں کوئی رہائش نہیں ہے منہدم کرنے کا فیصلہ کیا گیا ۔ سندھ بلڈنگز کنٹرول اتھارٹی نے منصوبہ بندی کر لی ہے۔ اتھارٹی نے منصوبے پر عمل کر نے کے لیے ٹاسک فورس قائم کر دی ہے۔ اور ان عمارتوں کی فہرست تیار کر لی ہے جنہیں منہدم کر نا مقصود ہے۔ ایسی غیر قانونی عمارتوں کی تعداد 326 ہے۔ اجلاس میں ڈائریکٹر جزل سندھ بلڈنگز کنٹرول اتھارٹی افتخار قائم خانی، ڈپٹی کمشنر جنوبی صلاح الدین، ڈپٹی کمشنر شرقی احمد علی صدیقی، ٹاسک فورس بلڈنگز کنٹرول اتھارٹی کے چیئرمین ایڈیشنل ڈائریکٹر جنرل آشکار داور، ٹاسک فورس کے دیگر ارکان،سینئر پولیس افسران اور دیگر نے شرکت کی۔ اجلاس میں فیصلہ کیا کہ ان عمارتوں کو منہدم کرنے کے لیے مربوط کارروائی کی جائے گی ۔ فیصلہ کیا گیا کہ منصوبے پر انتظامیہ اور پولیس کے رابطے و تعاون سے عملدرآمد کیا جائے گا ۔ضلعی سطح پر متعلقہ ڈپٹی کمشنرمہم کی نگرانی کریں گے جبکہ بلڈنگز کنٹرول اتھارٹی کی جانب سے قائم کی گئی ٹاسک فورس غیر قانونی عمارتوں کی نشاندہی کرے گی اورتکنیکی معاونت فراہم کرے گی ۔ کارروائی کے لیے سب ڈویژن کی سطح پر کمیٹیاں قائم کی جائیں گی۔