بھارت میں طوفان سے قبل لاکھوں شہریوں کی منتقلی

53

نئی دہلی (انٹرنیشنل ڈیسک) بحیرۂ عرب میں اٹھنے والا وایو نامی طوفان آج بھارت کی مغربی ریاست گجرات کی ساحلی پٹی سے ٹکرائے گا۔ بھارتی محکمہ موسمیات کے مطابق اس سمندری طوفان کے ساتھ 170 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار کے جھکڑ ہوں گے اور موسلا دھار بارش سے نشیبی علاقوں میں سیلابی صورت حال پیدا ہو سکتی ہے۔ وایو طوفان کی رفتار کیٹگری ایک کے طوفان کی ہے۔ گجرات کی حکومت کے مطابق 3 لاکھ افراد کو محفوظ مقامات پر منتقل کر دیا گیا ہے۔ گجرات کے وزیر اعلیٰ وجے روپانی نے فوج اور قومی آفتوں سے نمٹنے والی فورس کی مدد بھی طلب کی ہے۔ ساحلی علاقوں میں خصوصی حفاظتی انتظامات کا سلسلہ جاری ہے۔ بھارتی وزارت داخلہ نے علاقے میں ہائی الرٹ جاری کر دیا ہے۔ اس طوفان کے اثرات پاکستان کے ساحلی علاقوں پر بھی ہو سکتے ہیں، جب کہ اس کے اثرات سب سے زیادہ ڈیو، ویرل اور پوربندر کی بندرگاہ پر دیکھے جائیں گے۔ یہ گجرات سے ہوتا ہوا پاکستان میں داخل ہوگا، لیکن تب تک اس کی شدت میں کمی کا امکان ہے۔محکمہ موسمیات کا کہنا ہے کہ بدھ کی صبح تک وایو طوفان گوا کے ساحل سے 450 کلومیٹر، ممبئی سے 290 کلومیٹر اور گجرات کے ویراول سے 340 کلومیٹر دور تھا۔ بحیرۂ عرب سے اٹھنے والے اس طوفان کے بارے میں پیش گوئی کی گئی ہے کہ یہ آج جمعرات کی صبح گجرات کے ساحل سے ٹکرائے گا۔ ریاستی حکومت نے بتایا ہے کہ اس طوفان سے ریاست کے 10 اضلاع کے 408 گاؤں اور تقریباً 60 لاکھ افراد متاثر ہوں گے۔ یہ طوفان 2 دن رہے گا۔