عمران خان چند روز میں خود دین آر او مانگتے پھریں گے،مریم نواز

98

ظفروال (صباح نیوز) مسلم لیگ (ن) کی نائب صدر اور سابق وزیر اعظم نواز شریف کی صاحبزادی مریم نواز نے کہا ہے کہ وزیر اعظم عمران خان کی کوئی حیثیت نہیں کہ وہ کسی کو ‘این آر او’ دیں جبکہ چند روز میں وہ خود این آر او مانگتے پھریں گے‘ نواز شریف چاہتے تو ایک نہیں100 این آر اوز ان کی جھولی میں پھینک دیے جاتے۔ پنجاب کے ضلع نارووال کی تحصیل ظفروال میں جلسے سے خطاب کرتے ہوئے مریم نواز نے کہا کہ نواز شریف کا جیتا ہوا 2018ء کا الیکشن چوری کیا گیا‘ ن لیگ کی حکومت تھی تو ملک اوپر جا رہا تھا‘ بجلی کے منصوبے لگ رہے تھے‘ دہشت گردی ختم ہو رہی تھی‘ آج ادارے بھی وہیں ہیں‘ ٹوٹی پھوٹی جمہوریت بھی ہے لیکن نواز شریف آج حکومت میںنہیں ہیں جس دن سے نواز شریف کو اقامہ جیسے مذاق پر وزیراعظم کی کرسی سے ہٹا دیا گیا‘ اسی دن سے ملک کی تباہی شروع ہوگئی‘ آج کوئی بھی سکون کی زندگی بسر نہیں کررہا‘ بجٹ میں ہر چیز مہنگی کردی گئی ہے جس شخص نے زندگی میں کوئی محنت نہکی ہو‘ اس کو کیا معلوم ایک محنت کش کے گھر کا بجٹ کس طرح بنتا ہے اور اس کے گھر میںفاقے ڈیرے ڈال لیتے ہیں‘ بجٹ کے ذریعے عوام پر قیامت ٹو ٹی ہے‘ معلوم نہیں کس ضرورت کے تحت رات 12 بجے اچانک ٹی وی پر آگئے ‘ نیب نواز شریف کی بیٹی کو تو پکڑ لیتی ہے‘ علیمہ صاحبہ کو ہاتھ تک نہیں لگاتی ۔ مریم نواز نے کہا کہ نیازی کو صرف گو نہیں کہنا بلکہ گھر تک چھوڑ کر آنا ہے‘ عمران خان عوام کے ٹیکس کے پیسے پر عمرہ کرنے گیا ہوا تھا‘ سعودی عرب سے سرکاری جہاز میں اپنے وزرا کو نہیں بٹھایا کیونکہ جہاز پر عمران خان کے خاندان والوں اور دوستوں کا قبضہ تھا۔ مریم نے کہا کہ نیازی کی حیثیت این آر او دینے کی نہیں ‘چند دنوں بعد خود این آر او مانگے گا‘ نیازی کو پتا ہے پہلی اور آخری مرتبہ اقتدار میں آیا ہے‘ نیازی لندن فرار ہوگا اس کے بچے بھی وہی ہیں اور سب کچھ وہیںہے۔