ممکنہ سمندری طوفان کراچی سے نہیں ٹکرائے گا‘محکمہ موسمیات

68

کراچی (اسٹا ف رپورٹر) کمشنر کراچی افتخار شالوانی کی زیر صدارت اجلاس میں محکمہ موسمیات نے سندھ میں ممکنہ سمندری طوفان کے بارے میں بریفنگ دی۔ انہوں نے اجلاس کو بتایا کہ سندھ میں 16 ۔ 17 جون کو سمندری طوفان کا خطرہ ہے ۔ کراچی میں سمندری طوفان نہیں ٹکرائے گا جبکہ کراچی کے نزدیکی ساحل پر ممکنہ سمندری طوفان کی وجہ سے کراچی میں ہلکی بارش ، ہوائیں چلنے اور ہیٹ ویو کے خدشات ہیں ۔ جس کی وجہ سے کمزور درخت اور بجلی کے تار گرنے اور بل بورڈز اور دیگر کمزور اسٹرکچرز کو نقصان پہنچنے کا خطرہ ہو گا۔ صوبائی ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی نے بتایا کہ صورتحال کے پیش نظر شہریوں کو ہیٹ اسٹروک سے بچانے کے لیے الرٹ جاری کر دیا ہے۔اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ ممکنہ سمندری طوفان کے اثرات کے نقصانات اور ہیٹ ویو سے بچائو کے لیے متعلقہ اداے اپنے ہنگامی منصوبوں کو فوری طور پر حتمی شکل دیںگے اور شہریوں کو نقصانات سے بچانے اور ریلیف فراہم کر نے کے لیے ہنگامی اقدامات کریں گے ۔ جبکہ تمام ڈپٹی کمشنرز ہیٹ ویو کے پیش نظر اپنے اپنے ضلع میں ہیٹ ویو فرسٹ رسپانس سینٹرز کو فوری طور پر فعال کریں گے اجلاس میں صوبائی ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی ، تمام ڈپٹی کمشنرز، بلدیہ عظمیٰ ،ضلعی بلدیات ، کنٹونمنٹ بورڈز، پاکستان نیوی، پاکستان رینجرز، پولیس سندھ بلڈنگز کنٹرول اتھارٹی چھیپا اور ایدھی کے نمائندے اور دیگر متعلقہ ادارں کے افسران نے شرکت کی ۔ اداروں نے اجلا س کو بتایا کہ ممکنہ سمندری طوفان کے اثرات کے نقصانات سے بچنے کے لیے انہوں نے ہنگامی منصوبے تیار کر لیے ہیں ۔اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ ضلعی بلدیات اپنے اپنے علاقوں میں نصب فوری طور پر تمام بل بورڈز ہٹادیں گی ۔