سی پیک کے تحت پشاور تا کراچی ریلوے لائن پر کام جنوری میں شروع ہوگا

77

اسلام آباد (صباح نیوز) سی پیک کے تحت پشاور سے کراچی تک ریلوے لائن ایم ایل ون پر کام جنوری2020ء میں شروع ہوگا‘ منصوبے کو تین فیز میں مکمل کیا جائے گا‘ فیز ون میں نوشہرہ اور کوٹری سیکشن پر کام شروع ہوگا۔ فیز ون کا ابتدائی ڈیزائن فائنل ہوگیا جس کا پی سی ون منظوری کے لیے منصوبہ بندی کمیشن کوبھیج دیا گیا‘ فیز ون پر 2 ارب 24 کروڑ80 لاکھ ڈالر خرچ کا تخمینہ لگایا گیا ہے اور یہ منصوبہ 4 سال میں مکمل کیا جائے گا‘ ایم ایل ون کو ڈبل اور ٹرین کی رفتار160 کلو میٹر فی گھنٹہ کی جائے گی‘ ٹریک کے گرد مکمل طور پر باڑ اور ریلوے کراسنگ پر پل بنائیں جائیں گے۔ وزارت ریلوے نے ایم ایل ون کے فیز ون کے ابتدائی ڈیزائن کو فائنل کرنے میں تاخیرکی ہے جس کی وجہ سے کام شروع کرنے میں تاخیر ہوئی ہے۔جبکہ فیزٹو کا ابتدائی ڈیزائن ابھی تک مکمل نہیں ہوا ہے جو کہ دسمبر2019ء میں مکمل ہوگا‘ ایکنک نے بھی ابھی تک ایم ایل ون کے فیز ون کی پی سی ون کی منظوری نہیں دی ہے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ ایم ایل ون کے سیکشن کوٹری سب سے زیادہ خراب سیکشن ہے جس کی وجہ سے فیصلہ کیا گیا ہے کہ پہلے کوٹری پر کام شروع کیا جائے‘ اس لیے کوٹری اور نوشہرہ سیکشن کو فیزون میں رکھا گیا ہے‘ حال ہی میں 2 مال گاڑیوں کو حادثہ بھی کوٹری سیکشن میں ہوا تھا۔سی پیک کے فیز ٹو کی ابتدائی ڈیزائن دسمبر 2019ء میں مکمل ہوگا۔ ایم ایل ون کے فیزٹو میں راولپنڈی لاہورسیکشن شامل ہیں ۔