مودی کی جیت خطے میں نئے خطرات کا پیش خیمہ ہے،لیاقت بلوچ

83

لاہور(نمائندہ جسارت) قائم مقام امیر جماعت اسلامی پاکستان لیاقت بلوچ سے جماعت اسلامی آزاد جموں و کشمیر کے نائب امیر جہانگیر خان اور سیکرٹری جنرل راجا محمد فاضل نے ملاقات کی اور تحریک آزادی کشمیر اور آزاد کشمیر کی صورتحال سے آگاہ کیا۔ اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے لیاقت بلوچ نے کہاکہ بھارتی انتخابات میں نریندر مودی کی جیت نئے خطرات اور امکانات کا پیش خیمہ ہے ، بھارت کے تمام تر ظلم و جبر کے باوجود تحریک آزادی کشمیر اپنی منزل کی طرف رواں دواں ہے۔ مقبوضہ کشمیر میں جماعت اسلامی پر پابندی ، کشمیری قیادت کی پبلک سیفٹی ایکٹ اور کالے قوانین کے تحت گرفتاریاں اور ہتھکنڈے بھارتی بوکھلاہٹ کا ثبوت ہیں۔ انہوںنے کہاکہ کشمیریوں کو حق خود ارادیت ملنے سے ہی خطے میں پائیدار امن آئے گا ۔ بھارت سے مذاکرات ہی نتیجہ خیز ہوں گے جس میں کور ایشو مسئلہ کشمیر سر فہرست ہو اور اس کا حل تلاش کیا جائے ۔ جماعت اسلامی کشمیریوں کی پشتی بان ہے اور اخلاقی سیاسی جدوجہد میں ساتھ ہے ۔ لیاقت بلوچ نے کہاکہ پاک چین دوستی اور پاک چائنا اقتصادی راہداری سب دشمنوں کی آنکھوں میں کھٹک رہی ہے ۔ بلوچستان ہی ان کا ہدف ہے ۔ انہوںنے کہاکہ بلوچستان اور قومی سطح پر کمزوریاں دور کی جائیں ۔ بھارت کے حوالے سے قومی بیانیے کے لیے ریاست اور سیاست ایک پیج پر رہیں ۔ خلیج میں نئے خطرات خوفناک ہیں ۔ امریکا ایران پر مسلسل اقتصادی پابندیاں بڑھا رہاہے ۔ کشیدگی بڑھتی جارہی ہے ۔ کسی وقت بھی ایسی نئی جنگ مسلط ہوسکتی ہے جو خطے ہی نہیں دنیا کے بیشتر ممالک کو لپیٹ میں لے لے گی ۔ انہوںنے کہاکہ مسائل کا حل پرامن مذاکرات سے ہی ممکن ہے ۔دریں اثنا لیاقت بلوچ نے لاہور میں جماعت اسلامی کی قیادت کو 16 جون کو مہنگائی ، بے روزگاری اور آئی ایم ایف کی غلامی کے خلاف عوامی مارچ تحریک کی بھر پور تیاریوں کی ہدایات جاری کردی ہیں ۔