حکومت کو اب ایک دن بھی نہیں دے سکتے ،کارکنان اسلام آباد بند کرنے کی تیاری کریں،فضل الرحمٰن

76

اسلام آباد (صباح نیوز)سربراہ جمعیت علما اسلام (ف)مولانا فضل الرحمان نے واضح کیا ہے کہ ناجائز حکومت کو مزید ایک دن بھی نہیں دے سکتے، عمران خان کے اوسان خطا ہو چکے ہیں۔ اسلام آباد ضرور بند کریں گے اور یہ اسی سال ہوگا، اسلام آباد بند کرکے ملکی نظام کو جام کر دیا جائے گا اورمیں ایسا کرکے دکھاؤ ں گا، کارکنان تیاری جاری رکھیں،حکومت نہ گرانے کے بیانات بے معنی ہیں ایسے بیانات کی کیا ضرورت ہے، حکومت کو وقت دینا ہے تو پھر اے پی سی کا کیا جواز ؟ اسلام آباد میں کنٹینر کی پیشکش کرنے والے کو کسی ریڑھی پر بھی جگہ نہیں ملے گی۔ حکومت مخالف تحریک کا کم سے کم ایجنڈا عام انتخابات کا مطالبہ ہوگا، جن ارکان کو جعلی کہتے ہیں ان کی حمایت سے ان ہاؤس تبدیلی کا کوئی جواز نہیں ہے ۔ کیا جعلی مینڈیٹ والے ارکان سے تعاون لینا ہے شروع ہی سے اپوزیشن جماعتوں کوحکومت سازی کے عمل کا حصہ نہیں بننا چاہیے تھا، بعض قوتوں کو شاید ملا کے ہاتھوں کسی تحریک کی کامیابی پسند نہیں ہے ویسے ان حکمرانوں سے تنگ سب ہیں عوام کی پہلے ہی چیخیں نکل چکی ہیں۔ان خیالات کا اظہارانھوں نے گزشتہ روز اپنی رہائش گاہ پر ملکی سیاسی صورتحال اپوزیشن جماعتوں کے تعلقات کار ممکنہ احتجاجی تحریک کے حوالے سے ایک انٹرویومیں کیا۔مولانا فضل الرحمن نے کہا کہ آنے والے بجٹ سے عوامی مشکلات میں مزید اضافہ ہو گا عوام کی زندگیاں اجیرن بنادی گئی ہیں۔ عوام خود سڑکوں پر نکلیں گے اور اپوزیشن جماعتیں قوم کو ایسا کیا بیانیہ دیں گی کہ اسے ناجائز حکومت سے نجات ملے گی۔ ملک و قوم کو بحران سے نکال سکیں گے۔ انہوں نے کہا کہ میں پہلے دن اس ناجائز حکومت کے حق میں نہیں تھا۔ عمران خان کے پاس حق حکمرانی نہیں ہے۔ مہنگائی کے طوفان سے اب تو حکمران خود بے نقاب ہو گئے ہیں۔ سبز باغ دکھائے گئے تھے تاکہ اقتدار مل جائے۔ تبدیلی تو دور کی بات ہے عمران خان میں حکومت کرنے کی صلاحیت بھی نہیں ہے۔