اسپتال مین او پی ڈی ہر حال میں کھیلیں گے، ڈاکٹرز کو تحفظ دیں گے، شوکت یوسفزئی

64

 

پشاور (این این آئی) خیبرپختونخوا کے وزیر اطلاعات شوکت علی یوسفزئی نے کہا ہے کہ اسپتالوں میں اوپی ڈیز ہر حال میں کھلیں گی کیونکہ لوگوں کو صحت کی بہترین سہولیات فراہم کرنا حکومت کی ذمے داری ہے۔ OPD میں ڈیوٹی دینے والے ڈاکٹرز کو تحفظ دیں گے۔ OPD کو بند کرنے کی کوئی غلطی نہ کرے کیونکہ حکومت ہر حال میں اپنی رٹ قائم کرے گی۔ مذاکرات کی بات کو ڈاکٹر حکومت کی کمزوری نہ سمجھیں۔ حکومت کسی بھی ڈاکٹر سے بلیک میل نہیں ہوگی۔ لوگوں کو بہترین صحت کی سہولیات دینے کے لیے ریفارمز ہر حال میں لائیں گے۔ کچھ ڈاکٹر غریب عوام کو تکلیف پہنچانے اور حکومت کو بد نام کرنے کے لیے احتجاج پر تلے ہوئے ہیں۔ شرپسند ڈاکٹروں کی لسٹ بنا دی گئی ہے قانون کے مطابق ان کو شوکاز نوٹس جاری کر رہے ہیں۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے ڈاکٹروں کے احتجاج کے بعد حکومتی لائحہ عمل میڈیا اور عوام کے سامنے رکھنے کے لیے کابینہ حال میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کیا۔شوکت یوسفزئی نے کہا کہ حکومت کسی کے سامنے گھٹنے نہیں ٹیکے گی پرامن احتجاج سب کا حق ہے لیکن اگر ڈاکٹروں نے حکومتی انسٹالیشن کو نقصان پہنچایا تو حکومت انتہائی اقدام اٹھائے گی حکومت ڈاکٹروں کے ساتھ مذاکرات چاہتی ہے اور انکوائری رپورٹ آنے تک کوئی مطالبہ پورا نہیں کیا جائے گا او پی ڈی میں ڈیوٹی دینے والے ڈاکٹروں کو ہڑتالی ڈاکٹر روکنے کی کوشش نہ کریں۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان تحریک انصاف کی حکومت نے صوبے میں سسٹم کو بہتر بنانے کے لیے بہت سے ریفارمز لائی ہیں اگر ان پر عمل درآمد نہ ہو تو اس کا فائدہ ہی کیا ہوا۔ پشاور کے اسپتالوں میں لوگ دور دراز علاقوں سے علاج کے لیے آتے ہیں، ان غریب عوام کو تکلیف پہنچانے کے لیے ہڑتالی ڈاکٹروں نے زبردستی او پی ڈیز بند کیے ہوئے ہیں ہیں۔ انہوں نے میڈیا کو بتایا کہ ڈومیسائل کی بنیاد پر ڈاکٹروں کے تبادلے پر زیادہ تر ڈاکٹرز بھی متفق ہیں۔ ڈاکٹروں کو بہترین الاؤنسز اور مراعات کے ساتھ دور دراز علاقوں میں بھیجا جارہا ہے، دور دراز علاقوں میں رہنے والوں کا بھی حق ہے کہ ان کو بھی صحت کی بہترین سہولیات اور ڈاکٹرز اپنے علاقوں میں میسر ہوں۔