ممکنہ دہشت گردی کے پیش نظر سیکورٹی انتظامات سخت کیے جائیں، مسعود بنگش

51

لاڑکانہ (نمائندہ جسارت) ایس ایس پی لاڑکانہ مسعود احمد بنگش کی زیر صدارت لاڑکانہ ضلع کے اندر قائم یونیورسٹیز، کالجز اور ائرپورٹ انتظامیہ سے اجلاس ہوا جس میں ملکی حالات کو مدنظر رکھتے ہوئے ائرپورٹ سمیت تمام بڑے تعلیمی اداروں کی سیکورٹی مزید سخت کرنے کے لیے سیکورٹی آڈٹ پر غور کیا گیا۔ اجلاس میں کیڈٹ کالج سے وابستہ آرمی آفیسر، رینجرز آفیسر، اسپیشل برانچ کے افسران، ائرپورٹ سیکورٹی فورس اور سول ایوی ایشن کے نمائندوں سمیت شہید محترمہ بینظیر میڈیکل یونیورسٹی، قائدعوام انجینئرنگ یونیورسٹی اور سندھ یونیورسٹی کی سیکورٹی معاملات کے انچارجز نے شرکت کی۔ اس موقع پر ایس ایس پی نے کہا کہ ملکی حالات کو مدنظر رکھتے ہوئے ممکنہ کسی بھی دہشت گردی کے پیش نظر مذکورہ تعلیمی اداروں سمیت ریڈیو پاکستان اور اسپتالوں پر کڑی نظر رکھنے کی ضرورت ہے اس لیے تمام اداروں کی بائونڈری والز واچ ٹاورز، بیریئرز سمیت سیکورٹی گارڈز بڑھانے کے ٹھوس اقدامات اٹھائے جائیں۔ اس سلسلے میں تمام اداروں کے اندر سی سی ٹی وی کیمروں کو فعال کرکے سرپرائز چیکنگ کو یقینی بنانے کے احکامات بھی جاری کیے گئے ہیں جبکہ منگل کے روز اعلیٰ سطحی اجلاس بھی ہوگا جس میں ڈپٹی کمشنر لاڑکانہ، ونگ کمانڈر رینجرز اور دیگر متعلقہ افسران شرکت کریں گے۔