مسافروں کی پریشانی دور کرنے کیلیے سگنل سسٹم کو مکمل فعال بنا یا جائے، غلام مرتضیٰ

84

 

سکھر (نمائندہ جسارت) ڈپٹی کمشنر سکھر غلام مرتضیٰ شیخ نے کہا ہے کہ شہر میں بڑھتی ہوئی ٹریفک کو کنٹرول کرنے کے لیے تین روز میں جامع پلان تیار کرکے رپورٹ فراہم کی جائے اور سگنل سسٹم کو مکمل طور پر فعال بنایا جائے تاکہ شہریوں و مسافروں کو کسی قسم کی تکلیف کا سامنا نہ کرنا پڑے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے اپنے دفتر کے کمیٹی روم میں سکھر شہر میں بڑھتی ہوئی ٹریفک کو کنٹرول کرنے کے حوالے سے منعقدہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔ اجلاس میں ڈسٹرکٹ پولیس اور ٹریفک پولیس کے افسران سمیت متعلقہ عملداروں نے شرکت کی۔ اس موقع پر ڈپٹی کمشنر نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پبلک ٹرانسپورٹ میں چلنے والی ویگنوں میں گیس سیلنڈر استعمال کرنے کی وجہ سے قیمتی انسانی جانیں ضائع ہوتی رہتی ہیں، اس لیے سکھر میں مسافر ویگنوں سے گیس سیلنڈر ہٹانے کے لیے فوری طور پر آپریشن شروع کیا جائے۔ انہوں نے ٹریفک سارجنٹ سکھر کو سختی سے ہدایت کی کہ شہر میں بڑھتی ہوئی ٹریفک کو کنٹرول کرنے کے لیے تین روز میں جامع پلان تیار کرکے رپورٹ فراہم کی جائے کیونکہ عید قریب آتے ہی ٹریفک کے مسائل بڑھ جاتے ہیں، جس وجہ سے شہریوں اور مسافروں کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے، اس لیے شہر میں پارکنگ کے لیے جگہ مختص کی جائے، جبکہ بس ٹرمینل پر بھی بہتر سے بہتر انتظامات کرکے مسافروں کو ٹرمینل کے باہر ہی اتارا جائے تاکہ رش نہ ہو۔ اس موقع پر انہوں نے اسسٹنٹ کمشنر سکھر کو ہدایت کی کہ ملٹری روڈ پرقائم دکانوں پر چھاپے مارکر سرکاری نرخ ناموں کا جائزہ لیا جائے، جس کے پاس نرخ نامہ نہ ہو، اس پر جرمانہ عائد کیا جائے۔ انہوں نے میونسپل افسران کو بھی ہدایت کی کہ شہر میں صفائی کا خاص خیال رکھا جائے۔ اس سلسلے میں کسی قسم کی غفلت برداشت نہیں کی جائے گی۔