بڑے پیمانے کی صنعتوں کی افزائش مارچ میں 10.63 فیصد منفی رہی

56

کراچی ( اسٹاف رپورٹر)بڑے پیمانے کی صنعتوں (ایل ایس ایم) کی افزائش رواں سال مارچ میں 10.63 فیصد منفی رہی ہے۔ صنعتکاروں نے اس صورتحال پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ انٹرنیشنل مانیٹری فنڈ (آئی ایم ایف) سے کیے گئے معاہدے کے تحت روپے کے مقابلے میں ڈالر، قرضوں کی سرکاری سود (ممکنہ طور پر 12 فیصد) بجلی اورگیس کے نرخوں میں اضافے سے صنعتوں کی منفی افزائش 25 سے 30 فیصدتک ہوسکتی ہے۔ آئی ایم ایف کی شرائط سے صنعتوں کی پیداواری لاگت غیرمعمولی بڑھے گی جس سے بیشتر صنعتوں کا نہ صرف منافع کم ہوگا بلکہ خسارے میں جانے والی صنعتوں کا نقصان مزید بڑھ جائے گا جس سے سیکڑوں انڈسٹریز بند ہوجائیں گی۔ لاکھوں ہنرمند اور مزدور بے روزگار ہوجائیں گے۔