لگتا ہے آئندہ بجٹ آئی ایم ایف تیار کریگا، لیاقت بلوچ

121

لاہور(نمائندہ جسارت) نائب امیر جماعت اسلامی پاکستان اور سیاسی امور کمیٹی کے صدر لیاقت بلوچ نے لاہور میں مشاورتی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ حکومتی اقدامات سے واضح ہوگیاہے کہ آئندہ بجٹ آئی ایم ایف ہی تیار کرے گا، عمران خان حکومت نے قومی معیشت آئی ایم ایف کے سامنے سرنڈر کردی ۔ اسٹیٹ بینک ، ایف بی آر اور وزارت خزانہ پر اجنبیوں کا قبضہ ہوگیاہے اور اب ایمنسٹی اسکیم کے ذریعے ماضی کی شدید غلطی کو پھر دہرادیا گیاہے ۔ اگر ماضی میں حکومتوں کے ایسے اقدام حرام اور جرم تھے تو آج کی حکومت بھی اسی جرم میں شریک ہوگئی ہے ۔ عوام مہنگائی ، بے روزگاری ، مہنگے یوٹیلیٹی بلز سے تنگ آمد بجنگ آمد کے لیے تیار ہیں ۔ روپے کی قدر میں مسلسل کمی ، اسٹاک ایکسچینج میں کاروبار تباہ اور اب بجلی کی قیمتوں میں اضافے کی خبر ہوشربا ہے ۔انہوںنے کہاکہ عمران حکومت ہر لمحہ عوام کو نیا جھٹکا لگائے جارہی ہے ۔ حکومتی اقدامات سے واضح ہوگیاہے کہ آئندہ بجٹ آئی ایم ایف ہی تیار کرے گا اور آئی ایم ایف کا تیار کردہ بجٹ پارلیمنٹ کے سامنے پیش کردیا جائے گا ۔ہر وہ قوت جس نے عمران خان کو حکومت میں لانے کے لیے سرمایہ لگایا ، اب وہ سود سمیت اپنا سرمایہ واپس لے رہے ہیں ، عملاً عوام ہی پس رہے ہیں ۔ انہوںنے کہاکہ جماعت اسلامی رمضان پروگرامات میں عوامی مسائل اجاگر کرے گی اور عید الفطر کے بعد ملک گیر احتجاج منظم کرے گی ۔لیاقت بلوچ نے تحریک لبیک کے سربراہ سید خادم حسین رضوی کی ضمانت پر رہائی کے فیصلے کا خیر مقدم کیاہے اور کہاہے کہ عدالتی فیصلے سے واضح ہوگیا کہ حکومت کا عمل غیر قانونی اور غیر جمہوری تھا ۔ انہوںنے کہاکہ دینی جماعتیں اور محب دین کارکنان ہی پاکستان کی نظریاتی اور جغرافیائی سرحدوں کی حفاظت کے لیے بااعتماد قوت ہیں ۔