خام تیل کی قیمتیں71ڈالر فی بیرل سے تجاوز کرگئیں

38

کراچی(اسٹاف رپورٹر) امریکی صدر ٹرمپ کی جانب سے چین کی200ارب ڈالر کی درآمدات پر ڈیوٹیز کے نفاذ کے جواب میں چین کی طرف سے امریکی درآمدات پر ڈیوٹیز کے نفاذ کے اعلان سے عالمی مارکٹس میں خام تیل کی قیمتوں میں کمی کارحجان غالب ہواہی تھا کہ منگل کو حوثی باغیوں نے سعودی عرب کے دوپمپنگ اسٹیشنز پر مسلح ڈرون حملے کرکے تی لکی عالمی مارکٹس میں ہلچل مچادی ہے۔ حملے کے نتیجے میں ایک بار پھر خام تیل کی قیمتیں71ڈالر فی بیرل سے تجاوز کرگئی ہیں جو دو روز قبل70 ڈالر تک گرگئی تھیں۔ بدھ کو بینچ مارک خام تیل71.05ڈالر اور پاکستان کے زیراستعمال عرب لائٹ خام تیل71.28ڈالر فی بیرل تک پہنچ گیاہے۔ تیل کے عالمی ماہرین کے مطابق امریکہ اور چین کی تجارتی جنگ سے خام تیل کی قیمتیں گریں گی مگر مشرق وسطیٰ میں کشیدگی بڑھنے اور حوثی باغیوں کے مزید حملوں سے تیل کی قیمتیں بڑھیں گی اور یوں آئندہ دنوں میں خام تیل کی قیمتوں میں اتار چڑھائو دیکھنے میں آئے گا۔