اکرم راجپوت اقلیتی ملازمین کو انتقامی کارروائیوں کا نشانہ بنارہے ہیں

62

حیدر آباد (اسٹاف رپورٹر) بلدیہ اعلیٰ حیدرآباد کے برطرف کیے گئے مسیح ملازم اکبر عنایت مسیح نے اپنی بحالی اور بلدیہ یونین کے رہنما اکرم راجپوت کی زیادتیوں کیخلاف حیدرآباد پریس کلب کے سامنے 64ویں روز بھی اپنا احتجاج جاری رکھا۔ اس موقع پر انہوں نے الزام عائد کرتے ہوئے بتایا کہ بلدیہ سی بی اے یونین کے رہنما اکرم راجپوت اقلیتی ملازمین کو انتقامی کارروائیوں کا نشانہ بنارہے ہیں، جس کے تحت ہمیں جبری نوکریوں سے برطرف کردیا گیا ہے اور اب بھی اسٹاف یونین کی بدعنوانیوں کا سلسلہ جاری ہے اور آئندہ ہونے والی ڈی پی سی میں پروموشن کے لیے سی بی اے یونین کی جانب سے رشوت طلب کی جارہی ہے جبکہ اس پروموشن میں اقلیتی ملازمین کو نظر انداز کیا گیا ہے۔ انہوں نے سندھ کے صوبائی وزیر بلدیات اور میئر حیدرآباد سمیت ارباب اختیار سے مطالبہ کیا کہ بلدیہ سی بی اے یونین کے رہنما اکرم راجپوت کی کرپشن کا نوٹس لے کر سنیارٹی کی بنیاد پر پروموشن دیے جائیں اور ہمیں نوکریوں پر بحال کرکے ہماری بقایا تنخواہیں جاری کی جائیں۔