اہم خبریں

99

قطر میں طالبان سے مذاکرات ناکام ہوگئے، امریکی سفیر کا اعتراف
کابل/ واشنگٹن (اے پی پی/ آن لائن) افغانستان میں امریکا کے سفیر نے اعتراف کیا ہے کہ قطر میں طالبان کے ساتھ ہونے والے مذاکرات ناکام رہے ہیں۔ دوسری جانب طالبان کی مذاکراتی ٹیم کے سربراہ نے دعویٰ کیا ہے کہ افغانستان میں جاری جنگ میں امریکا شکست کے دہانے پر ہے اور جلد افغانستان سے چلا جائے گا۔ تفصیلات کے مطابق کابل میں امریکا کے سفیر جان بیس نے جنوبی افغانستان کے صوبے قندھار کے اپنے دورے میں کہا ہے کہ قطر میں طالبان کے ساتھ امریکا کے 6 دور کے مذاکرات ہوئے مگر کوئی نتیجہ برآمد نہیں ہوا۔ انہوں نے کہا کہ طالبان افغانستان کی حکومت کے ساتھ مذاکرات میں کوئی دلچسپی نہیں رکھتے اور نہ ہی وہ افغانستان میں جنگ کا خاتمہ چاہتے ہیں۔ دوسری جانب امریکا کے نیم سرکاری خبررساں ادارے وائس آف امریکا کی رپورٹ کے مطابق طالبان مذاکراتی ٹیم کے سربراہ شیر محمد ستنکزئی کی جانب سے یہ دعویٰ 28 اپریل کو قطر کے دارالحکومت دوحا میں ہونے والے ’داخلی اجلاس‘ میں سامنے آیا ہے، جس میں ان کا کہنا تھا کہ یا تو امریکا ’اپنی مرضی سے چلا جائے گا یا اسے واپس جانے پر مجبور کردیا جائے گا۔ طالبان رہنما نے یہ بیان امریکا کے ساتھ ہونے والے مذاکرات کے حالیہ دور سے 2 روز قبل دیا تھا۔ اس وقت تک امریکی نمائندہ خصوصی برائے افغان مفاہمتی عمل زلمے خلیل زاد اور طالبان نمائندوں کے مابین ایک ہفتے تک جاری رہنے والے مذاکرات کے حالیہ دور کو اختتام پذیر ہوئے ایک روز گزر چکا تھا۔ خیال رہے کہ چند روز قبل ہی سابق امریکی سیکرٹری دفاع رابرٹ گیٹس نے خبردار کیا تھا کہ اس بات کا قوی امکان موجود ہے کہ افغان حکومت کو مستحکم کیے بغیر افغانستان سے امریکی افواج کے انخلا کی صورت میں طالبان ملک کا کنٹرول سنبھال سکتے ہیں۔

وفاقی کابینہ میں ایک بار پھر توسیع، ڈاکٹر ثانیہ نشتروزیراعظم کی معاون خصوصی مقرر
اسلا آباد (نمائندہ جسارت) وفاقی کابینہ میں ایک بار پھر توسیع کردی گئی، ڈاکٹرثانیہ نشترکووزیراعظم کی معاون خصوصی مقررکردیا گیا، ثانیہ نشترکووفاقی وزیر کا درجہ دے دیا گیا۔ وزیراعظم ہاؤس سے جاری نوٹیفکیشن کے مطابق ڈاکٹر ثانیہ نشتر وزیر اعظم کی معاون خصوصی برائے سماجی تحفظ اور غربت مٹاؤ پروگرام مقررکی گئیں ہیں۔ ڈاکٹر ثانیہ نشتر بینظیر انکم سپورٹ پروگرام کی چیئرپرسن بھی ہیں۔

افتخار درانی نے مفتاح اسماعیل کی دستخط شدہ دستاویز ٹویٹر پر ر ڈال دیں
اسلام آباد(آئی این پی)وزیراعظم کے معاون خصوصی افتخار درانی نے کہا ہے کہ مسلم لیگ (ن) کے دور حکومت میں برآمدات میں مسلسل کمی آئی ، 5سالہ دور حکومت میں برآمدات منفی میں چلی گئیں ، تباہی پھیلانے کے لیے بھی محنت تو لگتی ہے ۔بدھ کو وزیراعظم کے معاون خصوصی افتخار درانی نے سابق وزیر خزانہ اور مسلم لیگ (ن) کے رہنما مفتاح اسماعیل کی دستخط شدہ دستاویز سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر ر ڈال دیں جس سے ظاہر ہوتا ہے کہ (ن) لیگی دور میں ملکی برآمدات میں مسلسل کمی ہوئی۔انہوں نے کہا کہ مالی سال 2013-14میں برآمدات 2.66فیصد تھی ، مالی سال 2014-15میں برآمدات کم ہو کر منفی 5.57فیصد پر آگئیں ، مالی سال 2015-16میں برآمدات مزید کم ہو کر منفی 12.17فیصد پر آگئیں جبکہ مالی سال 2016-17میں برآمدات کم ہو کر منفی 1.76پر آگئیں ۔انہوں نے کہا کہ تباہی پھیلانے کیلئے بھی محنت تو لگتی ہے ۔