فاٹا کی ترقی کیللئے تمام صوبے اپنا حصہ ڈالیں،وزیراعظم

84

وزیراعظم عمران خان نے تمام صوبوں سے درخواست کی کہ فاٹا کیلئے ترقیاتی منصوبوں کی رقم میں حصہ ڈالیں،این ایف سی میں سے 3 فیصد فاٹا کو دیں ۔

وزیراعظم عمران خان نے قومی اسمبلی اجلاس میں اظہار خیال کرتے ہوئے کہا فاٹاکے عوام چاہتے ہیں وہ بھی مین اسٹریم میں ہوں، ان کی بھی آوازہواورسنی بھی جائے، فاٹاسے متعلق بل پر تمام جماعتوں نے اتفاق کیاہے، اتفاق کرنے پر تمام جماعتوں کا مشکور ہوں۔ وزیراعظم نے کہا کہ تمام صوبے این ایف سی میں سے 3 فیصد فاٹا کو دیں گے، فاٹا میں دہشت گردی کیخلاف جنگ کے باعث بہت نقصان ہوا، فاٹامیں ترقیاتی منصوبے کیلئے بڑی رقم کی ضرورت ہے۔

عمران خان نے کہا کہ خیبرپختونخوا کے ترقیاتی فنڈ سے فاٹاکے ترقیاتی منصوبے مکمل نہیں ہوسکتے، تمام صوبوں سے درخواست کی ہے کہ فاٹا کیلئے ترقیاتی منصوبوں کی رقم میں حصہ ڈالیں۔انہوں نے کہا کہ ہماری زندگی میں ایک حادثہ ہوااورمشرقی پاکستان الگ ہوا، مشرقی پاکستان احساس محرومی کے باعث الگ ہوا، مشرقی پاکستان کے لوگوں میں احساس محرومی پایا جاتا تھا۔

وزیراعظم نے کہاکہ فاٹاکے عوام بھی پاکستانی شہری ہیں، جوعلاقے پیچھے رہ گئے ہمیں، ان علاقوں کوترقی دینی ہے، ہمارے دشمن احساس محرومی کو استعمال کر رہے ہیں ، ماضی کی نسبت ہمیں اب سوچ تبدیل کرنی ہوگی۔

عمران خان نے کہا جو پاکستان میں رہنے والے ہیں انہیں احساس محرومی نہیں ہوناچاہیے، احساس محرومی ختم کر نے کیلئے ہمیں اقدامات کرناہوں گے، دشمن کچھ علاقوں میں احساس محرومی کواستعمال کررہے ہیں۔ان کا مزید کہنا تھا بلوچستان،سندھ اورفاٹاسمیت سب لوگ پاکستانی ہیں۔