حکومت کا پاک ایران سرحد پر بھی باڑ لگانے کا فیصلہ

255

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے اورماڑہ واقعے کے بعد اعلان کیا ہے کہ پاکستان اور ایران کی سرحد پر بھی باڑ لگانے کا فیصلہ کیا ہے اور اس کام کا آغاز ہوچکا ہے۔

اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ یہ واقعہ علی الصبح بزی ٹاپ کے پاس ہوتا ہے، جس پر ہمیں دکھ و تکلیف ہے کیونکہ جس بے دردی سے ہمارے سپائیوں کو شہید کیا گیا، اس پر پوری قوم کو غم و غصہ ہے اور وہ جانتا چاہتے ہیں کہ یہ واقعہ کیوں ہوا اور کس نے کیا۔

انہوں نے کہا کہ اس واقعے کے بعد ایک الائنس بی آر اے سامنے آچکا ہے، جس میں مختلف بلوچ دہشت گرد تنظیمیں موجود ہیں اور انہوں نے اس واقعے کی ذمہ داری بھی قبول کرلی ہے۔

شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ مصدقہ اطلاعات ہیں کہ یہ واقعہ بلوچ دہشت گرد تنظیموں کی کارستانی ہے اور اس نئے الائنس کے کیمپ ایران کی سرحد اور ملحقہ علاقوں میں واقع ہیں اور تحقیق و تصدیق کے بعد قابل عمل معلومات ایرانی حکام کے حوالے کردی ہیں۔