کم لاگت رہائشی منصوبے شہروں میں رہائش کا مسئلہ حل کرنے کے لئے ناگزیر ہیں۔ گورنر سندھ

163

کراچی ( اسٹاف رپورٹر )گورنر سندھ عمران اسماعیل نے کہا ہے کہ کم لاگت رہائشی منصوبے بڑے شہروں میں عوام کے لئے رہائش کا مسئلہ حل کرنے کے لئے انتہائی ناگزیر ہیں،

موجودہ حکومت کی اولین ترجیح ہے کہ ملک سے غربت کا مکمل خاتمہ کیا جائے اس ضمن میں عوام کو سستی رہائشی سہولیات فراہم کرنے کے لیے ” ایفورڈایبل ہاؤسنگ نیا پاکستان” اسکیم کاآغاز کیا جبکہ صحت کی بہتر سہولیات فراہم کرنے کے لیے بھی موجود ہ حکومت نے ہیلتھ کارڈ کا اجراء شروع کر دیا ہے،

پہلے مرحلے میں سندھ کے پسماندہ ترین علاقہ تھرپارکر میں1,20,000خاندانوں کو ہیلتھ کارڈ جاری کئے جارہے ہیں جس کے تحت ملک بھر میں کسی بھی اسپتال سے علاج معالجہ کی سہولت حاصل ہوسکیں گی واضح رہے کہ اس کارڈ کے تحت 7لاکھ روپے سے زائد کی رقم علاج پر خرچ کی جاسکے گی۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے این ای ڈی یونیورسٹی آف انجینئرنگ اینڈ ٹیکنالوجی کے زیراہتمام نیشنل ورکشاپ ” ایفورڈایبل ہاؤسنگ نیا پاکستان” کی منعقدہ تقریب میں بحیثیت مہمان خصوصی اپنے خطاب میں کیا۔ گورنر سندھ نے کہا کہ کراچی جیسے بڑے شہر میں پلاننگ کے بغیر آبادی کے پھیلاؤکے باعث شہری مسائل پیدا ہوئے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ خصوصاً پلاننگ کے بغیر آباد ہونے والی آبادی میں سہولتوں کا فقدان وہاں رہائش پذیر عوام کے لئے مشکلات کا باعث ہے۔ اس ضمن میں کم لاگت رہائشی منصوبوں کے ذریعے اس مسئلہ پر قابو پایا جاسکتا ہے۔ گورنر سندھ نے کہا نیا پاکستان ہاؤ سنگ اسکیم کے تحت اگلے پانچ برس میں ملک بھر میں 5 ملین ہاؤ سنگ یونٹس کی تعمیر کا ہدف پورا کیا جائے گا اور یہ ہاؤسنگ اسکیم بالخصوص معاشرے کے ان طبقات کے لئے ہوگی جو کم لاگت پر رہائش جیسی سہولیات حاصل کرسکیں۔

اس ضمن میں ایک ٹاسک فورس بھی تشکیل دی گئی ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ہم سب اس حقیقت سے باخوبی واقف ہیں کہ عوام تک سستی ہاؤسنگ کی فراہمی، زمین کے علاوہ، تعمیراتی مواد اور عمارتوں کی تعمیرات کے معیار کو بہتر سے بہتر بنانے کی بھی ضرورت ہے۔ گورنر سندھ نے کہا کہ یہ ورکشاپ اکیڈمی میں ہاؤ سنگ ریسرچ سینٹرز کے نیشنل پلیٹ فارم کے قیام سے تعمیراتی لاگت کو کم کرنے اور معیار کو بہتر بنانے میں اہم کردار ادا کرے گا۔

گورنر سندھ نے وفاقی حکومت کی جانب سے ہر ممکن تعاون کا یقین دلایا، نیشنل ورکشاپ میں پاکستان کی تعمیراتی صنعت کے مختلف شعبوں سے ماہرین کی وسیع نمائندگی کی موجودگی خوش آئند ہے۔ اس موقع پر یونیورسٹی کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر سروش ھشمت لودھی اور پی ایم ہاؤسنگ ٹاسک فورس کے سربراہ ضیغم ایم رضوی نے بھی خطاب کیا۔ 

میڈیا کے نمائندگان سے گفتگو کرتے ہوئے گورنر سندھ نے کراچی میں پی ایس ایل کے میچوں کے انعقاد کو خوش آئند قرار دیتے ہوئے کہا کہ کراچی میں کرکٹ لوٹ رہی ہے اور یہاں کی رونقیں واپس آرہی ہیں۔ بین الاقوامی کھلاڑیوں کا پاکستان پر اعتماد اس کا بات کا مظہر ہے کہ پاکستان بالخصوص کراچی میں امن وامان کی بہتر صورتحال ہے۔ 

سندھ اسمبلی میں خطاب کے بارے میں کئے گئے سوال کا جواب دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ پاک بھارت حالیہ کشیدگی کے تناظر میں وفاق کی خارجہ پالیسی اور دیگر امور پر سندھ اسمبلی کے نمائندگان کو اعتماد میں لینا چاہتا ہوں ، تمام سیاسی جماعتوں کا مشکل صورتحال میں حکومت کا ساتھ دینا ہم سب کی کا میابی ہے۔