صحافیوں نے اخبارات کی آزادی کیلیے ہمیشہ قربانیاں دیں، چیئرمین پی سی پی

102
کراچی:پریس کونسل پاکستان کے چیئرمین صلاح الدین مینگل سی پی این ای کے وفد سے گفتگو کررہے ہیں
کراچی:پریس کونسل پاکستان کے چیئرمین صلاح الدین مینگل سی پی این ای کے وفد سے گفتگو کررہے ہیں

کراچی (اسٹاف رپورٹر) پریس کونسل آف پاکستان (پی سی پی) کے چیئرمین ڈاکٹر صلاح الدین مینگل نے کونسل آف پاکستان نیوز پیپر ایڈیٹرز (سی پی این ای) کے سیکرٹری جنرل ڈاکٹر جبار خٹک کی سربراہی میں سی پی این ای اراکین سے سی پی این ای کے مرکزی سیکرٹریٹ کراچی میں ملاقات کی، جس میں سی پی این ای کے جوائنٹ سیکرٹری عامر محمود، فنانس سیکرٹری حامد حسین عابدی، سینئر اراکین طاہر نجمی، غلام نبی چانڈیو، مقصود یوسفی، سعید خاور، سید مظفر اعجاز، عبدالرحمان منگریو، بشیر احمد میمن، محمود عالم خالد، محمد طاہر اور زاہدہ عباسی نے شرکت کی۔ پی سی پی کے چیئرمین ڈاکٹر صلاح الدین مینگل نے اس موقع پر کہا کہ صحافی برادری نے ہمیشہ اخبارات کی آزادی کے لیے قربانیاں دی ہیں اور آپ لوگ موجودہ صورتحال کو گہری نظر سے دیکھ رہے ہیں جبکہ حالات دگر گوں ہیں۔ میں نے ہر فورم پر کہا ہے کہ الیکٹرونک بشمول سوشل میڈیا کا انضمام تو سمجھ میں آتا ہے لیکن پرنٹ میڈیا کی اپنی الگ اور مسلمہ شناخت ہے۔ پرنٹ میڈیا کے لیے قوانین موجود ہیں اور اس کے لیے کسی خصوصی قوانین یا قانون سازی کی قطعاً ضرورت نہیں ہے۔ میں نے پہلی حکومت کو بھی مشورہ دیا تھا کہ میڈیا سے متعلق کسی بھی قسم کی قانون سازی اور فیصلہ سازی کے لیے اسٹیک ہولڈرز کو اعتماد میں لیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ ڈان لیکس کے معاملے پر پریس کونسل آف پاکستان نے متفقہ قرارداد منظور کی تھی کہ اخبارات اور اخباری صنعت کے کارکنان کے خلاف پریس کونسل آرڈیننس کے مطابق کسی اور فورم میں کارروائی نہیں کی جا سکتی۔ اس موقع پر سی پی این ای کے سیکرٹری جنرل ڈاکٹر جبار خٹک نے کہا کہ آزادی اظہار اور آزادی صحافت پر کسی قدغن کو برداشت نہیں کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ پرنٹ میڈیا نے مجوزہ ریگولیٹری اتھارٹی کے تصور کو یکسر مسترد کر دیا ہے۔ حکومت کے میڈیا کے لیے امتیازی قوانین اور قانون سازی کی وجہ سے پرنٹ میڈیا کے حلقوں میں شدید بے چینی پھیل گئی ہے۔ حکومت کو چاہیے کہ میڈیا کو درپیش سنگین مسائل کو مزید پیچیدہ کرنے کے بجائے مسائل حل کرنے کے لیے فی الفور ٹھوس اقدامات اٹھائے جائیں۔ سی پی این ای کے جوائنٹ سیکرٹری عامر محمود نے کہا کہ صلاح الدین مینگل صاحب پریس کونسل میں صحافیوں کے تحفظ کے لیے کام کرتے رہے ہیں اور اس حوالے سے ان کو مختلف اداروں کی جانب سے دباؤ کا سامنا بھی کرنا پڑا ہے۔ انہوں نے پریس کونسل کو مؤثر طور پر چلا کر گراں قدر خدمات انجام دی ہیں۔