بلدیہ میرپور خاص، منتخب نمائندوں میں اختلافات، نظام درہم برہم

56

میرپور خاص (نمائندہ جسارت) میونسپل کمیٹی میرپور خاص انتظامیہ کے درمیان مالی معاملات پر جاری اختلافات کے باعث میونسپل کمیٹی کا نظام درہم برہم ، ملازمین کی من مانیاں عروج پر ہیں جبکہ شہریوں کی زندگی اذیت میں مبتلا کردی ہے، ہزاروں نفوس پر مشتمل شہر کے بیشتر علاقوں کے مکین پانی کی بوند بوند کو ترس گئے، گزشتہ دس دنوں سے پانی کی فراہمی معطل۔ پچھلے کئی ماہ سے جاری میونسپل کمیٹی میرپورخاص انتظامیہ کے درمیان مالی معاملات پر اختلافات کے باعث میونسپل کمیٹی کا نظام درہم برہم ہوگیا ہے، گروپ بازیوں کی وجہ سے بلدیہ کا عملے کی من مانیاں بھی عروج پر پہنچ گئی ہیں۔ ایک طرف شہر بھر میں صفائی ستھرائی کا شدید فقدان پیدا ہو گیا ہے تو دوسری جانب واٹر سپلائی اسکیموں سے پانی کی سپلائی بند کر کے شہریوں کو سخت پریشان کیا جا رہا ہے۔ بھانسنگھ آباد، ہیرآ باد، جمنا داس کالونی، کھار پاڑہ ، تھامس آباد ، پاک کالونی ،حمیدپورہ کالونی سمیت دیگر علاقوں میں پچھلے دس دنوں سے پانی کی فراہمی بند ہے، جس کی وجہ سے ہزاروں مکین پانی کی بوند بوند کو ترس رہے ہیں اورپانی کے انتظار میں راتیں جاگ جاگ کر گزارنے پر مجبور ہیں۔ واضح رہے کہ واٹر سپلائی اسکیموں پر تعینات عملے کی من مانیوں کی وجہ سے جب انکا دل کرتا ہے پانی چھوڑتے ہیں، شکایات کے باوجود ان کیخلاف کوئی کارروائی نہیں ہوتی۔ اس حوالے سے مسلم لیگ نواز یوتھ ونگ کے سابق ڈویژنل صدر اور سماجی رہنما ملک عبدالغفار، جماعت اسلامی کے رہنما اور سابق کونسلر لالہ نور محمد اوردیگر نے حمید پورہ کالونی سمیت شہر کے مختلف علاقوں میں سیوریج کے نظام کی ناقص صورتحال اور پینے کے پانی کی عدم دستیابی پر گہری تشویش کا اظہار کیا ہے اور کہا ہے کہ بلدیہ کے منتخب چیئرمین، سی ایم او سمیت افسران عوام کے بنیادی مسائل پر توجہ دینے کے بجائے لڑائی جھگڑوں، کرپشن اور لوٹ مار میں مصروف ہیں جبکہ عوام پانی کی بوند بوند کو ترس رہے ہیں۔ نکاسی آب کی تباہی کے باعث گلی محلے اور شاہراہیں جوہڑ بنی ہوئی ہیں اور عوام پیدل چلنے سے بھی محروم ہیں۔ دوسری جانب بلدیہ کے افسران اختلافات اور عملے کے عدم تعاون کا بہانہ بناکر لوٹ مار میں تو مصروف ہیں لیکن عوامی مسائل پر توجہ نہیں دی جارہی۔ انہوں نے وزیر بلدیات اور سیکرٹری بلدیات و دیگر حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ نااہل افسران اور منتخب نمائندوں کی عوامی مسائل پر عدم دلچسپی کا فوری نوٹس لیا جائے اور عوام کو پینے کا صاف پانی اور صاف ستھرا ماحول مہیا کیا جائے۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ