حکومت نے اساتذہ کو ہمیشہ ڈھال کے طور پر استعمال کیا، مسلم دوست

30

چمن (پانا) گورنمنٹ ٹیچرز ایسوسی ایشن کے صدر حاجی عبدالباری مسلم دوست، جنرل سیکرٹری محمد فاروق، ولایت خان، ہدایت اللہ، عبدالمنان، بسم اللہ اور محمد یونس نے اپنے ایک مشترکہ بیان میں کہا ہے کہ اساتذہ کرام اپنے جائز حقوق کے حصول کے لیے جدوجہد میں کسی قربانی سے دریغ نہیں کریں گے۔ اساتذہ کی قربانیوں کی تاریخ سب کے سامنے ہے، حکومت نے اساتذہ کو ہمیشہ ڈھال کے طور پر استعمال کیا ہے۔ اساتذہ کو الیکشن، ووٹر لسٹ، مردم شماری جیسے کاموں کے لیے استعمال کیا جاتا ہے۔ گزشتہ انتخابات میں کام کا معاوضہ اور بہبود فنڈ کی اسکالر شپ ابھی تک ادا نہیں کی گئی، حالانکہ دوسرے اضلاع میں ٹریننگ کا معاوضہ اور بہبود فنڈ کی اسکالر شپ دی گئی ہے۔ الیکشن آفیسر نے 2583000 روپے الیکشن ٹریننگ کی مد میں 27 جولائی 2018ء کو خزانہ آفس قلعہ عبداللہ سے نکالے ہیں جس کی ادائیگی ابھی تک اساتذہ کو نہیں کی گئی، بہبود فنڈ، بچوں کی سکالر شپ بھی گزشتہ پانچ سال سے ادا نہیں کی گئی۔ مسائل جلد حل نہیں کیے گئے تو اساتذہ ڈی سی آفس اور ایجوکیشن آفس کے سامنے دھرنا دیں گے۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ