بیرسٹر فروغ نسیم سے ترک وفد کی ملاقات‘معارف فاؤنڈیشن سے متعلق گفتگو

40

اسلام آباد (اے پی پی) وفاقی وزیر برائے قانون و انصاف بیرسٹر فروغ نسیم نے کہا ہے کہ پاکستان اور ترکی کے درمیان قریبی تعلقات ہیں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے ترکی کے نائب وزیر خارجہ یوآز سلیم کرن اور ترکی کی معارف فاؤنڈیشن کے چیئرمین پروفیسر ڈاکٹر برول اکگن سے ملاقات کے دوران کیا۔ ملاقات میں فاؤنڈیشن کے پاک ترک اسکول کی انتظامیہ کو حوالے کرنے سے متعلق اقدامات پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ پروفیسر برول نے بتایا کہ معارف فاؤنڈیشن 2016ء میں پاکستان انٹرنیشنل این جی او کے طور پر رجسٹرڈ کرائی گئی جو کہ 90 سے زائد ممالک میں کام کر رہی ہے اور 30 ممالک میں اسکول قائم کر رکھے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کچھ شدت پسند مذہب اور تعلیم کی آڑ میں مشکوک سرگرمیوں میں ملوث ہیں اور ہم انہیں اپنے تعلقات ہائی جیک نہیں کرنے دیں گے۔ وفاقی وزیر قانون و انصاف بیرسٹر فروغ نسیم نے وفد کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کے ترکی اور ترک عوام کے ساتھ قریبی تعلقات ہیں۔ ترک شدت پسندوں کی جانب سے یہ غلط تاثر پیدا کیا گیا کہ وہ ترکی اور ترک صدر طیب اردوان کے حامی ہیں، یہ افراد پاکستانی قانونی نظام کے تحت مہلت حاصل کرتے ہیں تاہم یہ تاثر بتدریج تبدیل ہو رہا ہے۔ انہوں نے معارف فاؤنڈیشن کے اسکولوں کی انتظامیہ کو منتقل کرنے سے متعلق امور میں ترکی کو پاکستانی قوانین اور عدالتی نظام کے تحت اپنے مکمل تعاون کا یقین دلایا۔ وفاقی وزیر نے وفد کو یقین دلایا کہ ترکی کے دشمنوں کو پاکستان میں رہنے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔ ملاقات کے دوران پارلیمانی سیکرٹری برائے قانون و انصاف ملکہ بخاری اور پاکستان میں ترکی کے سفیر احسان مصطفی یارداکل بھی موجود تھے۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ