شوکت عزیز کے وارنٹ ،ڈاکٹر کامران مجاہد گرفتار ،شہباز کے داماد کی جائیداد قرقی کا حکم 

100

اسلام آباد/لاہور(نمائندہ جسارت/ خبرایجنسیاں) احتساب عدالت نے قومی خزانے کو نقصان پہنچانے کے ریفرنس میں سابق وزیر اعظم پاکستان شوکت عزیز کے ناقابل ضمانت وارنٹ جاری کردیے ،شہباز شریف کے داماد عمران علی کی تمام جائداد قرق کرنے کا بھی حکم جبکہ ڈپٹی ایم ڈی یوٹیلیٹی اسٹورز کارپوریشن مسعود عالم نیازی کو 5سال اور اکاؤنٹ افسر کو 7سال قید و جرمانے کی سزا سنا دی گئی،دوسری جانب نیب لاہور نے سابق وائس چانسلر پنجاب یونیورسٹی لاہور ڈاکٹر مجاہد کامران کو گرفتار کرلیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق احتساب عدالت کے جج محمد ارشد نے جمعرات کے روز سابق وزیراعظم شوکت عزیز کے ناقابل ضمانت وارنٹ جاری کردیے۔شوکت عزیز پر اختیارات سے تجاوز اور قومی خزانے کو نقصان پہنچانے کا ریفرنس دائر ہے۔ریفرنس میں نامزد لیاقت جتوئی اور دیگر ملزمان کی آج کی حاضری سے استثنا کی درخواست منظور کرلی گئی،عدالت کا دیگر ملزمان کی غیر حاضری پر اظہار برہمی۔مسلسل عدم حاضری پر ملزم عارف الدین کے بھی ناقابل ضمانت وارنٹ جاری کرتے ہوئے کیس کی سماعت یکم نومبر تک ملتوی کردی ۔ دوسری جانب احتساب عدالت نے سابق وزیراعظم نوازشریف کیخلاف العزیزیہ اسٹیل مل ریفرنس میں شواہد مکمل کرنے کے لیے بیان ریکارڈ کرنے کی نیب کی استدعا مسترد کردی، فلیگ شپ ریفرنس میں واجد ضیا کو بھی آج طلب کر لیا گیا۔قبل ازیں سابق وزیراعظم نوازشریف کی جمعرات کو حاضری سے استثنا کی درخواست منظور کی گئی،خواجہ حارث اور نیب پراسیکیوٹر کے درمیان گرما گرمی ہو تی رہی۔علاوہ ازیں کراچی کی احتساب عدالت نمبر 3نے بدعنوانی کے مقدمے میں ڈپٹی منیجنگ ڈائریکٹر یوٹیلیٹی اسٹورز کارپوریشن مسعود عالم نیازی کو 5سال قید بامشقت جبکہ اکاؤنٹ افسر ضیا اﷲ خان وارثی کو 7سال قید بامشقت اور جرمانے کی سزا سنائی ہے۔ دونوں ملزمان نے قومی خزانہ کو 19.2367 ملین روپے کا نقصان پہنچایاہے۔ادھراحتساب عدالت کے جج محمد اعظم نے شہباز شریف کے داماد عمران علی کی ذاتی ملکیتی جائداد قرق کرنے کا حکم دیا ہے ۔عدالت نے نیب کو دیگر شیئر ہولڈرز کی جائداد پر کارروائی کرنے سے روک دیا۔ نیب پراسیکیوٹر حافظ اسد اللہ نے عدالت کو آگاہ کیا کہ عدالت میں پیش عمران علی کی اربوں روپے مالیت کی جائداد پاکستان میں ہے، علی سینٹر اور علی ٹاور میں کروڑوں روپے مالیت کے دفاتر اور اپارٹمنٹ ہیں، علی اینڈ فاطمہ ڈویلپراور علی اینڈ کمپنی بھی ملکیت ہیں، ملزم کے نام پر مدینہ فیڈ ملز اور غوث اعظم ڈویلپرز بھی موجود ہیں، علی پروسیڈ فوڈز کمپنی کے علاوہ گلبرگ تھری میں 99 نمبر اور 100/Aپلاٹ بھی ملکیت ہیں۔نیب کے مطابق عمران علی یوسف پر پنجاب پاور ڈویلپمنٹ کمپنی کے سی ایف او اکرام نوید سے 131 ملین روپے رشوت لینے کا الزام ہے، انہیں تحقیقات کے لیے نیب طلب کیالیکن عمران علی یوسف طلب کرنے کے باجود پیش نہیں ہوئے۔شہباز شریف کے داماد عمران علی یوسف کے وارنِٹ جاری ہوئے تاہم ملزم بیرون ملک فرار ہو گیا۔ بعد ازاں عدالت نے شہباز شریف کے داماد کو اشتہاری قرار دینے اور ان کی تمام جائدادضبط کرنے کا حکم دے دیا۔ ادھرنیب لاہور نے سابق وائس چانسلر پنجاب یونیورسٹی لاہور ڈاکٹر مجاہد کامران کو گرفتار کر لیا ہے، انہیں جسمانی ریمانڈ کے لیے آج احتساب عدالت میں پیش کیا جائے گا۔ ڈاکٹر مجاہد کامران کیخلاف بے ضابطگیوں اورقواعدوضوابط سے ہٹ کربھرتیاں کرنے کا الزام ہے۔نیب ایگزیکٹو بورڈ نے مجاہد کامران کیخلاف تحقیقات کا حکم دیا تھا۔مجاہد کامران کو اس وقت حراست میں لیا گیا جب وہ نیب کے دفتر بے ضابطگیوں کے الزام پر پیشی کے لیے گئے تھے۔مزید برآں نیب نے شہبازشریف کے صاحبزادے سلمان شہباز سے اثاثوں، بینک اکاؤنٹس سمیت آمدن اور اخراجات کی تمام تفصیلات مانگ لیں جبکہ بیرون ملک اثاثوں کی تفصیلات بھی طلب کی گئی ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ

جواب چھوڑ دیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.