تھر میں بچوں کی اموات نا اہلی اور کرپشن کا نتیجہ ہے‘ممتاز سہتو

28

کراچی( اسٹاف رپورٹر ) جماعت اسلامی سندھ کے جنرل سیکرٹری ممتاز حسین سہتو ایڈووکیٹ نے کہا ہے کہ تھر میں بچوں کی مسلسل اموات حکومتی نا اہلی اور کرپشن کا نتیجہ ہے۔تھر کے قحط متاثرین میں سندھ حکومت کی جانب سے مفت تقسیم کے لیے فراہم کردہ گندم میں مٹی اور کچرے کی ملاوٹ کی خبریں سامنے آنا قحط زدہ عوام کے زخموں پر نمک پاشی اور حکومتی بے حسی کی انتہا ہے۔ انہوں نے ایک بیان میں کہا کہ میڈیا وعوامی احتجاج اور عدالت عظمیٰ کے ازخود نوٹس کے باوجود تھر میں قحط کی صورتحال سمیت بچوں کی اموات کا تسلسل حکومت کی عدم توجہی اور کرپشن کا نتیجہ ہے۔صرف رواں سال 500 کے قریب معصوم بچے غذائی قلت و طبی سہولیات کی وجہ سے فوت ہو چکے ہیں مگرحکمرانوں کے کانوں پرجون تک نہیں رینگتی۔ سندھ میں پیپلز پارٹی کی گزشتہ10 سال سے بر سر اقتدار حکومت ہونے کے باوجود تھر کے مسائل کو مستقل بنیاد پر حل کرنے کے بجائے صاف پانی کے آر او پلانٹ لگانے سے لے کر گندم تقسیم اور صحت کی سہولیات کی فراہمی کو کرپشن کا ذریعہ بنا لیا گیا ہے۔ 10 سال میں پیپلز پارٹی کی حکومت تھر میں اگر سنجیدہ ،کرپشن فری اور مستقل بنیادوں پر اقدامات کرتی تو آج یہ صورتحال نہ ہوتی۔ تمام تر حکومتی دعوؤں کے باوجود صورتحال جوں کی توں ہے۔ اس لیے حکومت نمائشی اقدامات کے بجائے انسانی ہمدردی کے ناتے بچوں کی اموات اور تھر کو قحط کی صورتحال سے نجات دلانے کے لیے سنجیدہ، کرپشن فری اور مستقل بنیادوں پر اقدامات کرے۔

Print Friendly, PDF & Email
حصہ